مقبول خبریں
یورپین اسلامک سینٹر کے منتظم اعلیٰ سکالر مولانا محمد اقبال کے والد محترم کی وفات پر اظہار تعزیت
اوورسیز پاکستانیوں کیلئے پنجاب میں سرمایہ کاری کے منافع بخش مواقع ہیں،افضال بھٹی
پاک برٹش انٹر نیشنل ٹرسٹ کے چیئرمین چوہدری سرفراز کی جانب سے عشائیہ کی تقریب
میاں صاحب نظریے کو سمجھتے نہیں، وقت کے ساتھ مؤقف بدلنا نظریہ نہیں ہوتا:بلاول
مقبوضہ کشمیر :بھارتی فوج کے ہاتھوں ایک اور نوجوان شہید،مظاہرے،جھڑپیں
لوٹن ٹائون ہال میں ادبی بیٹھک، لارڈ قربان نے صدارت کی معروف شعرا کرام کی شرکت
برطانیہ کے ساحلی شہر سائوتھ ہیمپٹن میں ملی نغموں کی گونج، ڈپٹی میئر کی خصوصی شرکت
پاکستان کی سیاسی صورتحال، یورپین یونین جمہوریت کے ساتھ کھڑی ہے : ڈاکٹر سجاد کریم
مودی کی سبکی
پکچرگیلری
Advertisement
آرٹیکلز
وقت گزرنے سے کشمیریوں کا حق کم نہیں ہو سکتا !
٢٦ جنوری کو بھارت اپنا یوم جمہوریہ منارہا ہے اور وادی کشمیر کے عوام اس دن یوم احتجاج کے طور اپنا کاروربار بند کرکے بھارت کویہ یاد دلانا چاہتے ہیں کہ بین الاقوامی سطح پرکشمیریوں کے ساتھ جووعدے کیے گئے ہیں ان پر عمل کیا جائے ۔پھر یہ کہ اقوام متحدہ کی قراردادوں کی رو
مسئلہ کشمیر اور بھارتی ہٹ دھرمی
بھارت کی سیاسی جماعت عام آدمی پارٹی کے ایک سینئر رہنما پرشانت بھوشن نے مقبوضہ کشمیر میں 7 لاکھ بھارتی افواج کی موجودگی سے متعلق حال ہی میں موقف اختیار کرتے ہوئے مطالبہ کیا ہے کہ کشمیر میں فوج کی تعیناتی کے معاملے پر کشمیر میں ریفرنڈم کروایا جائے چونکہ بھارتی افواج کی موجودگی سے
میلاد النبیؐ کے حوالے سے چند ضروری گذارشات
ربیع الاول کا ماہ مبارک شروع ہوتے ہی دنیا بھر کے مسلمان حضور سرور کائنات نبی آخرالزماں حضرت محمد صلی اللہ علیہ وسلم کی ولادت باسعادت کی مناسبت سے خوشیاں مناتے ہیں۔ اسی ماہ میں حضور کی پیدائش اور وصال ہوا۔ حضورؐ کی ولادت کا دن میلاد النبیؐ کے طور پر مسلمانوں کی ایک اکثریت
اٹارنی جنرل ڈومینک گریو کا بیان اور ہمارا کردار .. !!
برٹش اٹارنی جنرل ڈومینک گریو نے ڈیلی ٹیلیگراف کو اپنے ایک انٹرویو میں دیگر کمیونٹیز کے ساتھ اینگلو سیکسن کمیونٹی اور پاکستانی کمیونٹی کے متعلق خصوصاًکرپٹ ہونے کی بات کی۔ 23 نومبر ہفتہ کے روز یہ انٹرویو خبر کی صورت میں اشاعت میں شامل ہوا اس صبح سجاد کریم فجر کی نماز کے لئے بیدار
یہاں 120سالوں میں کچھ بھی نہیں بدلا
دنیا میں کچھ لوگ ایسے کام بھی کر جاتے ہیں جن کیلئے انسانیت ہمیشہ انہیں خراج تحسین پیش کرتی رہتی ہے۔ برطانوی فوٹو جرنلسٹ ہیزل تھامسن 2002 میں انڈیا گئیں تو مقصد کچھ اور تھا لیکن اس دورے نے انکی زندگی ایسی بدلی کہ وہ گیارہ سال تک انسانی خدمت کے ایسے منصوبے سے منسلک
خاک اغیار میں دفن قومی ہیرو
سید جمال الدین افغانی گزشہ صدی کی دنیائے اسلام کی بڑی عظیم شخصیت تھیں۔ کابل کے نواحی قصبہ اسد آباد میں غالباً 1838ء میں پیدا ہوئے۔ تکمیل تعلیم کے بعد ہندوستان میں قیام بھی کیا اور حجاز کا سفر بھی کیا۔ وطن واپس آکر والی افغانستان امیر دوست محمد کی ملازمت اختیار کرلی۔ امیر دوست
سعیدہ بیگم کا میدان جنگ
40 سال قبل سعیدہ کے خاوند ایک حادثہ میں ہلاک گئے تھے۔ وہ سُسرال میں موجود جائیداد سے بے دخل ہوگئیں اور چار چھوٹے چھوٹے بیٹوں کو لے کر سرینگر میں اپنے میکے آئیں جہاں انہیں ایک کوٹھری دی گئی۔ غسل خانے سے بھی تنگ کوٹھری میں رہائش پذیر سعیدہ بیگم کے لیے کشمیر ایک
یا اللہ یا رسول، پرویز مشرف بے قصور
لال مسجد آپریشن کے نتیجے میں مسجد کے نائب خطیب غازی عبدالرشید اور اُن کی والدہ کے مقدمہ ءقتل کی تفتیش پر مامور مشترکہ ٹیم نے سابق صدر جنرل (ر) پرویز مشرف کو بے گناہ قرار دے دیا ہے ۔ تحقیقاتی ٹیم کے مطابق ” پرویز مشرف لال مسجد آپریشن کے دوران وقوعہ پر موجود
کتے کی دم !!
کتے کی دم بہت سے حوالوں سے مشہور ہے کبھی اس کے سیدھے نہ ہونے پر اعتراض کیا جاتا ہے تو کبھی ہلنے پر لیکن کبھی کسی نے اس کے پیچھے چھپی حقیقت جاننے کی کوشش نہیں کی۔ اب اٹلی کی ٹورنٹو یونیورسٹی کے اعصابی سائنس داں پروفیسر جارجيو ویلورٹگارا نے اس بارے میں کہا
کنٹرول لائن پرجہنم زدہ زندگی
سری نگر ... ایک مٹی پر آباد کشمیریوں کی سدا بہار دشمن فوج نے جموں میں کشمیریوں کو جب سے ایک دوسرے سے اور جن پیاروں سے دور کیا ہے وہ کنٹرول لائن کے نزدیک رہنے والے لوگ موت کے سائے میں زندگی گزار رہے ہیں۔ ہر طرف خوف اور بے یقینی کے ڈیرے
ہندو کارڈ کھیلنے کی کوشش ..!!
بھارت میں پارلیمانی انتخابات میں تو ابھی کم ازکم پانچ مہینے باقی ہیں لیکن آئندہ مہینے دلی سمیت کئی ریاستوں میں ہونے والے ریاستی اسمبلی کے انتخابات کے سبب ملک کی سیاسی فضا کافی گرم ہے اور انتخابی مہم زور پکڑتی جا رہی ہے۔ ملک کی دو بڑی جماعتوں کے رہنما یعنی بی جے پی
کشمیریوں کی جدوجہد کا مثالی دن
24 اکتوبر کا دن کشمیریوں کی جدوجہد آزادی میں بڑی اہمیت کا حامل ہے۔ 1947 میں اس روز آزاد کشمیر کے نام سے آواز خطے میں ایک انقلابی حکومت قائم ہوئی جس کا قیام کا مقصد مقبوضہ کشمیر کا دوتہائی حصہ جس پر بھارت نے فوجی جارحیت کے تحت قبضہ کرلیا ہے اس آزاد کرانے
ڈرون حملون کی حقیقت کیا ؟؟
ڈرون حملوں کے بارے میں حکومت پاکستان یا امریکہ کی طرف سے کبھی بھی کھل کر کوئی پالیسی سامنے نہیں آئی۔ مثال کے طور پر پاکستان اگر کہتا ہے کوئی فرد اگر منشیات اس ملک میں لائے گا تو اسے سزا ہوگی۔ اسی طرح امریکھ اگر یہ کہتا ہے کہ اس کے ملک میں دہشت
امریکی معیشت کو 24 ارب ڈالر کا نقصان
امریکی تجزیہ کاروں کا کہنا ہے کہ 16 روزہ کاروبارِ حکومت کی جزوی بندش نے امریکی معیشت کو اربوں ڈالر کا نقصان پہنچایا، اور یہ کہ حکومتی اقدامات کے بارے میں جاری غیر یقینی صورتِ حال کے باعث معیشت کو مزید نقصان پہنچ سکتا ہے۔ شٹ ڈاؤن کے اقتصادیات پر پڑنے والے اثرات کے اعداد
مسئلہ کشمیر کا حل اور مشرف فارمولا !!
کشمیر ایک جذباتی موضوع ہے۔ جس پر ہر کشمیری اور پاکستانی کاایک نقطہ نظر ہے اور 67 سال گزر جانے کے بعد بھی ہم میں سے اکثر اپنے اس نقطہ نظر سے ادھر ادھر نہیں ہوئے کہ کشمیر کا الحاق پاکستان سے ہونا چاہئے۔ آزاد کشمیر جس کو تحریک آزادی کے لئے بیس کیمپ بننا
دو بکروں کے صدقے کا سکینڈل ..!!
سیاست میں مختلف جانوروں کا حقیقی اور معنوی طور پر استعمال اب عمومی بات بن چکی ہے۔انتخابات میں سیاسی جماعتوں کے جانوروں کے انتخابی نشانات،انسانوں کو ان کی عادات و خصائل کی بنیاد پر کسی جانور سے تشبہہ بھی دیا جاتا ہے جیسے بہادری پر شیر کہنا،بزدلی پر گیدڑ ،عیاری پر لومڑی وغیرہ وغیرہ۔بھارتی مقبوضہ
ڈرامے پاکستان کی بدنامی کے لئے تھے
اتوار کی صبح بھارتی وزیر اعظم سے ناشتے کی میز پر ملاقات کے موقع پر میرا ایک ہی پیغام ہے کہ میاں جی !اپنے آپ کو ایک ایٹمی طاقت کے سربراہ سمجھیں۔یہ ملاقات ہماری نہیں، بھارت کی ضرورت ہے۔اس نے ہمیں ہر طرح سے آزما کے دیکھ لیا۔ من موہن جی کئی الزامات دہرائیں گے، ممبئی
آزاد کشمیر مسلم لیگ(ن) کا انتشار برطانیہ تک ..!!
26دسمبر2010کو میاں محمد نواز شریف نے خود مظفر آباد جا کر مسلم لیگ ن آزاد کشمیر کے قیام کا اعلان کیا تو کشمیریوں کی اکثریت نے اس وقت اسے نا پسندیدگی کی نظر سے دیکھا چونکہ روایتی طور پر1932میں قائم ہونیوالی مسلم کانفرنس ہی مسلم لیگ کی ذیلی جماعت تھی مختلف ادوار میں مسلم کانفرنس
کیمیائی ہتھیارکون استعمال کر گیا ؟؟؟
کہتے ہیں کہ شامی صدر بشارالاسد پر امریکی حملے کا اس قدر دباؤ تھا کہ انہیں کیمیائی ہتھیاروں کی موجودگی تسلیم کرنا پڑ گئی۔ دوسری جانب تمام حلقوں کو یقین تھا کہ اقوام متحدہ کے معائنہ کار دمشق کے نواح میں اعصاب شکن گیس کے حملے کی تصدیق کر دیں گے۔ لیکن اس کے باوجود