مقبول خبریں
پاکستان کے نظریاتی استحکام کیلئے مسلم لیگ کو منظم کرنا وقت کی اہم ضرورت ہے:فدا حسین کیانی
گوادر چیمبر آف کامرس کے نومنتخب صدر گوادر رئیل اسٹیٹ کیلئے اثاثہ ثابت ہونگے: ذیشان چوہدری
کشمیری آزادی کی جنگ لڑ رہےہیں ،یہ انکا پیدائشی حق ہے:چوہدری جاوید ،چوہدری یعقوب
نواز شریف کے دوبارہ پارٹی صدر بننے کی راہ ہموار، شق 203 سینیٹ سے بھی منظور
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فورسز کی فائرنگ، مزید 2 نوجوان شہید
کونسلر وحید اکبر کا آزاد کشمیر کے جسٹس شیراز کیانی کے ا عزاز میں عشائیے کا اہتمام
برطانیہ کے ساحلی شہر سائوتھ ہیمپٹن میں ملی نغموں کی گونج، ڈپٹی میئر کی خصوصی شرکت
ڈاکٹر سجاد کریم کی قیادت میں یورپی پارلیمنٹ کے وفد کا جارحیا پہنچنے پرپرتپاک استقبال
کرپٹ خان
پکچرگیلری
Advertisement
آرٹیکلز
ایک نیا انقلاب فرانس
’ اپنی لڑکیوں کو سنبھال کر کیوں نہیں رکھتے؟ اگر تم انہیں توجہ دوگے تو کسی کو ان پر بری نظر ڈالنے کی ہمت نہیں ہوگی،‘ جج صاحب نے اپنی عدالت میں پیش ہونے والے ادھیڑ عمر شخص کی سرزنش کرتے ہوئے کہا۔ اس شخص کی سات لڑکیوں میں سے دو اپنے اپنے آشناؤں
سوال نفرت،جواب نفرت
آپ کو معلوم ہے بھارت کا سب سے دیانتدار سیاستدان کون ہے؟؟؟؟؟ مئی ۲۰۱۳ میں پورے ہندوستان میں ایک این جی او نے اس حوالے سے رائے شماری کروائی تو ہر طرف سے ایک ہی نام سامنے آیا، مس ممتا بنرجی۔ بھارت کی اس دیانتدار ترین سیاستدان نے ساری زندگی مذہب اور عقیدے کی قید
آخری کالم
اگر زبان سے ادا ہونے والے ہر لفظ کو آخری لفظ اور اور قلم سے لکھے جانے والے ہر حرف کو آخری حرف سمجھنے لگیں تو ہم سچ بولنے اور سچ لکھنے پر مجبور ہوجائیںگے، سچائی ہماری جبلت بن جائے گی، اور پھر یہ جبلت ہمیں حق پرست بھی بنا
بریکنگ نیوز
بابا!! فائرنگ والے انکل اب ہمارے سکول میں بھی آئیں گے؟ گھر سے سکول کے لیے نکلتے ہوئے میرے چھوٹے بیٹے نے اچانک سے سوال کر دیا۔مجھے اس دھند آلود موسم میں ایک دم سے پسینہ آگیا۔ میں کیا جواب دیتا، میرے پاس کوئی جواب ہی نہیں تھا۔ میں نے اس کے کوٹ کا کالر
ملالہ نام کی لڑکی......
چینی انرجی سیور،امریکی بادام،جاپانی گاڑیاں اور بھارتی پان اور چھالیہ،پاکستان میں سب ملتا ہے،سب بکتا ہے،حد تو یہ ہے کہ اب تو بھارتی دوائیں بھی پاکستان میڈیسن مارکیٹ پر چوری چھپے راج کر رہی ہیں۔لوگ پوچھتے ہیں پاکستان کیا بناتا ہے؟ میں کہتا ہوں منصوبے اور صرف منصوبے،ڈیموں کے منصوبے،غربت دور کرنے کے منصوبے،آبادی کنٹرول
ہم آدمی تمہارے جیسے …
’وفا کرو گے وفا کرینگے ، جفا کرو گے جفا کرینگے ، ستم کرو گے ستم کرینگے ، کرم کرو گے کرم کرینگے ، ہم آدمی ہیں تمہارے جیسے جو تم کروگے وہ ہم کرینگے ‘۔ زمانہ طالب علمی میں برصغیر کے معروف براڈ کاسٹر ضیاء محی الدین کی آواز میں یہ مشہور زمانہ نظم
بس ذرا چین تک.....
’’لاہور سے بنکاک چار گھنٹے،اتنی ہی دیر بنکاک میںعارضی قیام اور پھر شنگھائی تک کا سفر مزید چار گھنٹے،مجھے چین کے معروف کاروباری شہر پی دو YIWUپہنچناتھا۔YIWUسنہ2000سے پہلے ایک دیہات تھا،مگر پھر چین نے اس دیہات کو چائنہ پراڈکٹس کی ہول سیل مارکیٹ میں بدل دیا۔اس شہر کی آبادی بارہ لاکھ کے لگ بھگ ہے
ٹیکس چوری کا بڑھتا ہوا رجحان
میری ایک ہمشیرہ گزشتہ دس برس سے انگلستان میں رہ رہی ہے،نباتات کے شعبے میں پی ایچ ڈی ہے،پچھلے برس پاکستان آئی توکہنے لگی کہ اس کے پائوں میں چند ہفتوں سے شدید درد ہے،انگلستان میں ڈاکٹر سے مشورہ کیا تو ڈاکٹر نے آپریشن تجویز کیا۔اسی دوران اسے دو ہفتے کیلئے پاکستان آنا پڑا۔ہم سب
تبدیلی ‘ مگر کیسے ؟؟
صحت،تعلیم،توانائی اور روز گار کسی بھی قوم کی زندگی میں چار مسائل حل ہو جائیں تو معاشی ترقی اور اقتصادی مضبوطی کیلئے نہ تو کوئی اضافی جدو جہد کرنا پڑتی ہے نہ کوئی کاوش،قومی ترقی کی ریل گاڑی کی نئی منزلوں کی جانب خود بخود دوڑتی چلی جاتی ہے،ہمارا سب سے بڑا مسئلہ ہی یہ
ظلم کی وراثت
وزیر اعظم پاکستان کے مشیر برائے خارجہ امور جناب سرتاج عزیز نے چند روز قبل نو منتخب افغانستان صدر جناب اشرف غنی سے کابل میں ملاقات کی اور انہیں وزیر اعظم پاکستان کاتہنیتی پیغام پہنچایا۔وزیر اعظم نے اپنے پیغام میں صدر اشرف غنی کو افغانستان کی ترقی اور خوشحالی کے حوالے سے پاکستان کی طرف
اوورسیز پاکستانی
پاکستان کے افغانستان سے تعلقات ہمیشہ برادرانہ رہے ہیں اور دونوں ممالک کے عوام کے درمیان محبت و احترام کا ایک مضبوط رشتہ استوار ہے لیکن بعض سیاسی اوتار چڑھائو کے باعث حکومتی سطح پر ان مضبوط روابط کو کمزور کرنے کی اندرونی و بیرونی سطح پر سازشوں کا سلسلہ عرصہ دراز سے جاری رہا
ہوشمندی کے تقاضے
بھارتی وزیر اعظم مسٹر نریندر مودی نے اپنے ایک حالیہ بیان میں کہا ہے کہ پاکستان اب اس قابل نہیں کہ بھارت سے کوئی روایتی جنگ لڑ سکے۔ان کی اس بیان کے ساتھ ہی لائن آف کنٹرول پر بھارتی فوجی اشتعال انگیزیوں کا سلسلہ بھی ایک دم سے بڑھ گیا اور پاکستان سے تجارتی مراسم
سازشوں کے جال
امید اور یقین میں بہت فرق ہوتا ہے۔امیدمیں ہونے اور نہ ہونے،دونوں کا امکان ہوتا ہے جبکہ یقین کسی بھی قسم کے شبے سے پاک کیفیت کا نام ہے۔امید انسانوں سے وابستہ کی جاتی ہے جبکہ یقین اس سے کہیں بالا تر منز ل کا نام ہے۔یقین حصول منزل کی ضمانت ٹھہرتا ہے جبکہ امید
نیا پاکستان چاہیئے مگر کیسا ؟
سیاسی کارکن پیپلز پارٹی کا ہو، ن لیگ کا، پی ٹی آئی کا یا کسی اور جماعت کا ۔۔۔۔ ملک و قوم کا وفادار ہے، اسے ملک کا درد ہے ‘اسکی پارٹی دو چار سال کیلئے اقتدار میں آجائے تو وہ اسی زعم میں وقت گذار دیتا ہے کہ لوگ اسے ایم این اے
خان پر قادری کا ’’دم ‘‘ ہو چکا
’’ جو بھی گلو بٹ ملا اسے طالبان کے حوالے کر دیں گے ‘‘عمران خان کے اس جملے نے فوجی جوان ،ایک شہید کی ماں کے جذبات کو بری طرح مجروح کیا۔ ضرب عضب کے شہید کی ماں کی گرج کو پوری دنیا نے سنا ۔شہید کی ماں نے کہا کہ عمران خان کو علم
پاک فوج کے خلاف سازشیں
پاکستان دشمنی کے حوالے سے کچھ کتابیں بھی منظر عام پر آچکی اور آرہی ہیں، ان تمام کتابوں کے مصنفین کا تعلق یا تو امریکہ سے ہے یا وہ امریکہ میں قیام پذیر ہیں،پہلی کتاب کے مصنف عقیل شاہ ہیں اور کتاب کا نام’The Army And Democracy‘اس کتاب میں فاضل مصنف نے اس فلسفہ
کچھ بے رحم اور احسان فراموشوں کیلئے
یہ اسی رمضان کی بات ہے مجھے اچھی طرح سے یاد ہے کہ رات کے ڈھائی بجے کے قریب موبائل کی گھنٹی نے مجھےایکدم چونکا دیا تھا، “سر آب کے ہاں سحری ختم ہونے میں کتنی دیر ہے؟‘مجھے لیفٹیننٹ یوسف کی اس معصومیت پر ذرا سی بھی حیرت نہیں ہوئی۔وہ ہمیشہ سے ایسا ہی ہے۔اسے
سنار یا لوہار
گلورات سکون کی نیند سو رہا تھا کہ اسے اچانک پیٹ میں درد کی شدت نے جگا دیا معمولی گھریلو علاج معالجہ پر اکتفا کیا تو وقتی سکون میسر آیا اور پھر سہانے خوابوں کی دنیا میں کھو گیا صبح حسب معمول جاگ کر روز مرہ کے کام کاج شروع کر دیئے اگلی رات ایک
کشمیر براستہ غزہ
اپنی تکلیف اور اپنی مصیبت بھول کر مصیبتوں میں گھرے دوسرے انسانوں کا احساس کرنا ہر ایک کے بس کی بات نہیں،اس کام کے لئے بڑے حوصلے اور بڑی ہمت کی ضرورت ہوتی ہے۔وزیر اعظم میاں نواز شریف نے حال ہی میں غزہ کے مظلوم فلسطینیوں کیلئے ایک ملین امریکی ڈالر کی امداد کا جو