مقبول خبریں
پاکستان پریس کلب برطانیہ یارکشائیر ریجن کا سہیل وڑائچ کے اعزاز میں استقبالیہ
پاکستان اور بھارت میں واقعی برابری کہاں ؟ ایک طرف محبت دوسری طرف نفرت
پاکستانی نژاد پیشہ ورانہ ماہرین اور طلبہ جہاں بھی ہوں اقدار کی پاسداری کریں: نفیس زکریا
برطانوی شاہی جوڑے کی پاکستان میں زبردست پذیرائی، وزیر اعظم اور صدر مملکت سے ملاقاتیں
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
حلقہ ِ ارباب ِ ذوق کے ادبی پروگرام میں پاکستانیوں اور کشمیری کونسلرز کی بڑی تعداد میں شرکت
پارک ویو کمیونٹی سنٹر شہیر واٹر میں ہمنوا یو کے کے زیرِ اہتمام یوم آزادی پاکستان تقریب کا انعقاد
قومی برطانوی انتخابات میں کشمیر دوست امیدواران کو ووٹ دینے بارے آگاہی میٹنگ
سہمے ہوئے لوگوںسے بھی خائف ہے زمانہ
پکچرگیلری
Advertisement
دورے پرحکومت پاکستان،حکومت آزاد کشمیر اور راجہ نجابت کی معاونت کے مشکور ہیں:کرس لیزے
نوٹنگھم:برطانوی پارلیمنٹ میں قائم کشمیر گروپ اپنی رپورٹ جلد مکمل کرے گا تاکہ پارلیمنٹ میں مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں پر مفصل بحث کرائی جائے گی، دورہ آزاد کشمیر و پاکستان تاریخی نوعیت کا تھا،حکومت پاکستان،حکومت آزاد کشمیر اور تحریک حق خود ارادیت کے چیئرمین راجہ نجابت حسین کی معاونت کے مشکور ہیں،کرس لیزے ایم پی کی دورہ آزاد کشمیر سے واپسی پر اپنے حلقہ انتخاب کے لوگوں کو بریفنگ جبکہ اس تقریب میں مقامی ممبران پارلیمنٹ ورنن کوکر،الیکس نورس ایم پی تحریک کے چیئرمین راجہ نجابت حسین سر پرست سردار عبدالرحمان خان،سابق ممبر اسمبلی آزادی کشمیر برائے اوورسیز راجہ منشی خان،لارڈ میئر نوٹنگھم کونسلر لیاقت علی،سابق لارڈ میئر کونسلر گلنواز خان،مسلم کانفرنس برطانیہ کے سابق صدر چوہدری محمد بشیر رٹوی اور کمیونٹی لیڈروں کے علاوہ مقامی صحافیوں نے بھی شریک ہو کر پارلیمنٹری وفد کے دورہ آزاد کشمیر کو خراج تحسین پیش کیا مگر ممبران پارلیمنٹ سے مطالبہ کیا کہ وہ کنٹرول لائن کی دوسری طرف مقبوضہ کشمیر کا بھی دورہ کریں جہاں پر انسانی حقوق کی مسلسل خلاف ورزیاں ہورہی ہیں اور عالمی برادری کی بے حسی اورعدم دلچسپی کی وجہ سے لاکھوں کشمیری اپنی جانوں کا نزرانہ پیش کر چکے ہیں جبکہ برطانوی حکومت سے بھی مداخلت کر کے مسئلہ کشمیر کو گفت و شنید کے ذریعے حل کرانے پر زور دیا جن میں کشمیریوں کی بھی ہر سطح پر نمائندگی ہو،تقریب کا اہتمام نوٹنگھم کشمیری کمیونٹی فورم کی کنوینئر کونسلر نگہت خان نے کیا تھا جنہوں نے مہمانوں کو خوش آمدید کہتے ہوئے جہاں کرس لیزے کو وفد کے دورے کی تفصیلات بتانے کی دعوت دی وہیں یہ خوش خبری بھی دی کہ نوٹنگھم ایسٹ کی لیبر پارٹی نے اپنے حلقے سے کشمیری عوام کے حق خود ارادیت کی حمایت میں ایک قرارداد پاس کر کے اپنی جماعت کو اہم پیغام دیا ہے اور اب توقع ہے کہ برطانیہ بھر میں لیبر پارٹی اور دیگر سیاسی جماعتوں کے لوگ بھی کشمیریوں کے حق میں قراردادیں پاس کروائیں گے تاکہ برطانیہ کی سیاسی جماعتیں مسئلہ کشمیر کو اپنی پالیسیوں میں شامل کر سکیں،کرس لیزے نے اپنے خطاب کے دوران سلائیڈز کی روشنی میں اپنے دورہ آزاد کشمیر خصوصاً چکوٹھی کنٹرول لائن اور مہاجر کیمپوں کے دورے پر اپنے تاثرات دیتے ہوئے کہا کہ وہاں کہ حالات دیکھ کر دل خون کے آنسو روتا ہے مگر کشمیریوں کی بد قسمتی ہے کہ دو ایٹمی قوتوں نے اس مسئلے کو اپنی انا کا مسئلہ بنایا ہوا ہے اور کشمیری گزشتہ ستر سالوں سے زبردستی مسلسل انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں سے متاثر ہو رہے ہیں انہوں نے کہا کہ وہ اپنے گروپ کے دیگر ارکان کے ہمراہ ہرمحاذ پر کشمیریوں کا کیس لڑتے رہیں گے،اس موقع پر گیڈلنگ نو ٹنگھم کے ممبر پارلیمنٹ ورنن کوکر ایم پی نے زور دیکر کہا کہ عالمی برادری کو اپنی آنکھیں کھول کر کشمیریوں کو اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق حق خود ارادیت دینا ہو گا ہم نے مسئلہ کشمیر کوبہت نظر انداز کر دیا،اب وقت کا تقاضا ہے کہ کشمیریوں کو ان مظالم سے جان چھڑائی جائے جس کیلئے نہ صرف وہ پارلیمنٹری گروپ بلکہ تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے چیئرمین راجہ نجابت حسین کی مسلسل کاوشوں کو قدر کی نگاہ سے دیکھتے ہوئے مستقبل کے پروگراموں میں بھرپور تعاون کریں گے،نوٹنگھم نارتھ کے ممبر پارلیمنٹ الیکس نورس ایم پی نے اپنے خطاب میں کہا کہ وہ اپنے مقامی ساتھیوں اور تحریکی رہنمائوں کے ساتھ مل کر کشمیری عوام کے حقوق کے حصول میں بھرپور معاونت کریں گے اس موقع پر تحریک کے چیئرمین راجہ نجابت نے الیکس نورس ایم پی کو اقوام متحدہ میں انسانی حقوق کی رپورٹ کی کاپی بھی پیش کی اور اپنے خطاب میں نوٹنگھم کے تمام لیبر ممبران پارلیمنٹ کو شاندار الفاظ میں خراج تحسین پیش کیا۔خصوصی رپورٹ:فیاض بشیر