مقبول خبریں
اولڈہم ہوپ ووڈ ہاؤس ہیلتھ سنٹر میں خواتین کو آگاہی دینے کیلئے لیڈی ہیلتھ ڈے کا اہتمام
بھارتی لابی نے کشمیر کانفرنس کوانے کے لئے اوچھے ہتھکنڈے استعمال کیے: شاہ محمود قریشی
تحریک کشمیر ڈنمارک کے زیر اہتمام کوپن ہیگن میں اظہار یکجہتی کشمیر کانفرنس کا انعقاد
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
میئرآف لوٹن (برطانیہ) نے شاہد حسین سید کو کمیونٹی سروسز پر شیلڈ پیش کی
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
راجہ نجا بت حسین کی صدر آزاد کشمیر سردار مسعود اور وزیر اعظم راجہ فاروق حیدر سے ملاقات
کشمیر‘ جہاں خواب بھی آنسو کی طرح ہیں!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
صحافی محدود وسائل میں خدمات انجام دے رہے ہیں جو قابل ستائش ہیں:مئیر کونسلر شاداب قمر
اولڈہم:برطانیہ میں بسنے والے پاکستانی و کشمیری نژاد صحافی کمیونٹی اور مادر وطن کے تشخص کو اجاگر کرنے کیلئے محدود وسائل کے باوجود خدمات انجام دے رہے ہیں برطانوی معاشرے میں پاکستانی و کشمیری نژاد تمام شعبہء ہائے جات میں نمایاں کردار ادا کر رہے ہیں لیکن سیاست کے میدان میں لوکل سطح سے لیکر برطانوی و یورپین پارلیمنٹ میں ہر سال بتریج اضافہ ہو رہا ہے ایسے ہی اولڈہم ٹاؤن کے مئیر کونسلر شاداب قمر نے مقامی صحافیوں کو مئیر پالر میں بلا کر انہیں ایوارڈ سے نوازا ۔اس موقع پر مئیر کونسلر شاداب قمر کا کہنا تھا کہ میرے لیے یہ اعزاز کی بات ہے کہ مقامی صحافیوں کو ایوارڈ دے رہا ہوںاورصحافی محدود وسائل میں خدمات انجام دے رہے ہیں میرے لیے یہ اعزاز کی بات ہے کہ میں اپنی مئیر شپ کی معیاد ختم ہونے سے پہلے مقامی صحافیوں کو ایوارڈ دے رہا ہوں۔انکی خدمات قابل ستائش ہیں برطانیہ کے ممتاز صحافی چوہدری محمد اسحاق کا کہنا تھا کہ ہم مئیر کا شکریہ ادا کرتے ہیں کہ انہوں نے صحافیوں کی خدمات کو سراہا مقامی کمیونٹی راہنما محمد مشتاق کا کہنا تھا کہ صحافی کمیونٹی کے مسائل کو بہتر اجاگر کر رہے ہیں۔ایوارڈ کی تقریب میں چوہدری محمد اسحاق۔ثاقب راجہ، مصطفیٰ مغل، عارف چوہدری، تنویر کھٹانہ، محمد ندیم ارشاد، کونسلر شاہد مشتاق، محمد فیاض بشیر، چوہدری محمد مشتاق اور آصف مغل کے علاوہ پاکستان پریس کلب برطانیہ کے صدر ارشد رچیال اور لندن سے خصوصی طور پر آئے اظہر جاوید کو صحافتی خدمات پر شیلڈز دی گئیں۔خصوصی رپورٹ:فیاض بشیر