مقبول خبریں
مسرت چوہدری اور اختر چوہدری کا لارڈ مئیر عابد چوہان کے اعزاز میں ظہرانہ
پاکستان پریس کلب یوکے کے سالانہ انتخابات اور تقریب حلف برداری
چیئرمین پی آئی ایچ آرچوہدری عبدالعزیز کوسوک ایوارڈ فار کمیونٹی سروسز سے نواز گیا
برطانوی شاہی جوڑے کی پاکستان میں زبردست پذیرائی، وزیر اعظم اور صدر مملکت سے ملاقاتیں
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
اسرار احمد راجہ کی کتاب کی تقریب رونمائی ،مئیر آف لوٹن کونسلر طاہر ملک ودیگرافراد کی شرکت
پارک ویو کمیونٹی سنٹر شہیر واٹر میں ہمنوا یو کے کے زیرِ اہتمام یوم آزادی پاکستان تقریب کا انعقاد
ہر انسان کو اس کے مذہب کے مطابق تدفین کی اجازت ملنی چاہئے: سعیدہ وارثی و دیگر
Corona virus
پکچرگیلری
Advertisement
بیرسٹر سلطان نے مڈ لینڈ میں بھی پی ٹی آئی کشمیر کی رکنیت سازی کا آغاز کر دیا
برمنگھم:آزاد کشمیر کے سابق وزیر اعظم و پی ٹی آئی کشمیر کے صدر بیرسٹر سلطان محمود چوہدری نے کہا ہے کہ اوورسیز کشمیری و پاکستانی اس لئے پی ٹی آئی کے ساتھ ہیں کیونکہ ہم ایک طرف مسئلہ کشمیر کے حل کیلئے کوشاں ہیں اور دوسری طرف کرپشن اور تعصب کی سیاست کے خاتمے کی جدو جہد کر رہے ہیں،بیرون ملک چونکہ میڈیا کی وجہ سے لوگوں میں شعور ہے اب جبکہ پی ٹی آئی کشمیر نے برطانیہ میں بھی ممبر شپ کا آغاز ہو چکا ہے اور ایسے لگتا ہے کہ برطانیہ کے کشمیری پی ٹی آئی کشمیر کے پلیٹ فارم سے مسئلہ کشمیر کو آگے بڑھانا چاہتے ہیں اور عمران خان کے ویژن کو لے کر آگے بڑھنا چاہتے ہیں،ان خیالات کا اظہار انہوں نے پی ٹی آئی کشمیر کے زیر اہتمام مڈ لینڈ میں ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا،اس موقع پر بیرسٹر سلطان محمود چوہدری نے مڈ لینڈ میں بھی پی ٹی آئی کشمیر کی رکنیت سازی کا آغاز کیا،بیرسٹر سلطان محمود چوہدری نے کہا کہ اب چونکہ مڈ لینڈ میں رکنیت سازی کا آغاز ہو گیا ہے اور برطانیہ میں10مئی کو پی ٹی آئی کشمیر کے انٹرا پارٹی الیکشن ہوں گے اور اس میں تمام عہدیدار منتخب کئے جائیں گے،انہوں نے کہا کہ آج میں برسلز جا رہا ہوں وہاں پر یورپین پارلیمنٹ میں خطاب کے علاوہ میں یورپی یونین میں اعلیٰ سطحی ملاقاتیں بھی کروں گا،اسی طرح میں22مارچ کو جنیوا میں احتجاجی مظاہرے کی قیادت کروں گا اور اقوام متحدہ کے کمیشن برائے انسانی حقوق کے اعلیٰ عہدیداروں سے ملاقاتیں کر کے انٹر نیشنل کمیونٹی کی توجہ مسئلہ کشمیر،مقبوضہ کشمیر میں جاری انسانی حقوق کی پامالی اور بھارت کی طرف سے آئے روز سیز فائر لائن کی خلاف ورزیوں پر مبذول کرائوں گا۔