مقبول خبریں
برطانوی معاشرے میں رہتے ہوئے تمام تہوار میں حصہ لینا چاہئے: افضل خان
سپینش شہریت کے حامل سائنسدانوں کی قدرتی آفات پر ریسرچ
پاکستان میں فٹبال کے فروغ کیلئے انٹرنیشنل سوکا فیڈریشن کا قیام، ٹرنک والا فیملی کو خراج تحسین
چیئر مین پی ٹی آئی عمران خان تیسری بار دلہا بن گئے، بشریٰ بی بی سے نکاح ہو گیا
بھارتی ریاستی دہشتگردی کیخلاف مقبوضہ کشمیر میں ہڑتال، تعلیمی ادارے بند
کشمیر میں جاری انسانی حقوق کی پامالیوں کو رکوانے کے سلسلہ میں پروگرام کا انعقاد
اوورسیز پاکستانیز ویلفیر کونسل کے زیراہتمام یوم یکجہتی کشمیر پر کار ریلی کا انعقاد
راجہ نجابت اور ان کی ٹیم کامسئلہ کشمیرپر متحرک کردار قابل ستائش ہے: سٹوورٹ اینڈریو
کیا یورپ ٹوٹ رہا ہے ؟
پکچرگیلری
Advertisement
وزیر اعظم آزاد کشمیر ایک ناکارہ پرزے سے زیادہ کی حیثیت نہیں رکھتے:ڈاکٹر مسفر حسن
برنلے:جہلم ویلی ہٹیاں بالا میں ڈی سی کی ہدایات پر پروفیسر جمیل پر پولیس کے بے ہیمانہ تشدد کی بھرپور مذمت کرتے ہیں،وزیر اعظم آزاد کشمیر ایک ناکارہ پرزے سے زیادہ کی حیثیت نہیں رکھتے،ایکٹ74اور شملہ معاہدے کی فوری منسوخی کشمیریوں کی آزادی کا راستہ ہموار کر سکتی ہے جلد بین الاقوامی سطح پر بھرپور مہم کا آغاز کیا جائے گا،ڈاکٹر مسفر حسن صدر لبریشن لیگ برطانیہ و یورپ،جہلم ویلی آزاد کشمیر کے پروفیسر پر صرف اس بات پر ڈی سی مظفر آباد کے حکم پر پولیس کے بیمانہ تشدد کہ پروفیسر مذکو اے ڈی سی کو درخواست دی تھی پبلک ٹرانسپورٹ گاڑیوں میں تمباکونوشی پر پابندی عائد کی جائے نہ صرف موجودہ حکومت کی ابتر کارکردگی کا ثبوت ہے بلکہ یہ اس امر کا واضع ثبوت ہے کہ پاکستان کے زیر انتظام کشمیر میں بڑی برادریوں کے لوگ چھوٹی برادریوں کے لوگوں کے ساتھ کیا سلوک کر رہے ہیں اور وزیر اعظم آزاد کشمیر برادری کے ہاتھوں یرغمال اور مجبور و بے بس ہو چکے ہیں اس ضمن میں انہوں نے ایکٹ74نے مظفرآباد اسمبلی کو ایک ناکارہ پرزہ بنا دیا ہے،جہاں کرپشن بد عنوانی اور کمیشن مافیا کا قبضہ ہے،انہوں نے کہا کہ پاکستان کے حکمرانوں نے شملہ معاہدہ کر کے کشمیر کے مسئلہ کو دو طرفہ معاملے میں تبدیل کر کے کشمیری عوام کے ساتھ غداری کا ارتکاب کیا ہے اس ضمن میں انہوں نے کہا کہ اگر حکومت پاکستان کشمیری عوام کے ساتھ انکے حق خود ارادیت کے معاملے میں مخلص ہے تو وہ فوری طور پر ایکٹ74شملہ معاہدے اور کراچی معاہدے کو منسوخ کر کے آزاد کشمیر بشمول گلگت بلتستان پر پوری ریاست کی نمائندہ حکومت قائم کر کے کشمیریوں کی حکومت کو با اختیار اور نمائندہ حکومت تسلیم کرے،اگر یہ اقدامات نہیں کئے جاتے تو نام نہاد یکجہتی کا دن منا کر پاکستانی اور کشمیری قوم کو اربوں روپے کا نقصان پہنچا کر کشمیریوں کا کوئی فائدہ نہیں کیا جا رہا،اس ضمن میں بہت جلد مہم کا آغاز کیا جائے گا تاکہ بین الاقوامی دنیا کو زمینی حقائق سے با خبر کیا جائے۔خصوصی رپورٹ:فیاض بشیر