مقبول خبریں
یورپی پارلیمنٹ کی انسانی حقوق کمیٹی کا مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں پر ہیئرنگ کا فیصلہ
بیسٹ وے گروپ کے سربراہ سرانور پرویز کی جانب سے کمیونٹی رہنمائوں کے اعزاز میں استقبالیہ
نبوت بھی اﷲ کی عطا ہے اور صحابیت بھی، نبوت بھی ختم ہے اور صحابیت بھی: ڈاکٹر خالد محمود
ملک دشمن عناصر دہشتگردی کے ذریعے پاکستان میں الیکشن سبوتاژ کرنا چاہتے ہیں:عمران خان
مقبوضہ کشمیر :بھارتی فوج نے نوجوان کا سر تن سے جدا کر دیا ،احتجاج،جھڑپیں
شیر خدا نے نبی پاک کی آواز پر لبیک کہہ کر اسلام سے محبت اور وفا کی عمدہ مثال قائم کی
پیپلزپارٹی ہی آئندہ انتخابات میں چاروں صوبوں میں اکثریت حاصل کریگی:میاں سلیم
مسئلہ کشمیر پرقوم کا نکتہ نظر اور قربانیاں رنگ لا رہی ہیں:جموں کشمیر تحریک حق خود ارادیت
نیا موسم تمہارا منتظر ہے۔۔۔۔۔۔۔۔
پکچرگیلری
Advertisement
سکھ تنظیموں کی جانب سے گوردواروں میں بھارتی حکام کے داخلے پر پابندی
لندن: سکھ تنظیموں کی جانب سے دنیا بھر میں واقع گوردواروں میں بھارتی حکومتی عہدیداران کے داخلے پر پابندی کے بعد سے بھارتی حکومت کو شدید پریشانی کا سامنا ہے۔ایک رپورٹ کے مطابق سکھ تنظیموں کا موقف ہے کہ سکھوں کے مفاد کے خلاف اور انتہا پسند ہندو گروپوں کے نظریات کی ترویج کے لیے گوردواروں کے استعمال کی اجازت نہیں دی جائے گی۔برطانیہ کی سکھ فیڈریشن نے بھارتی حکومتی عہدیداران کے گوردواروں میں داخلے پر پابندی کی تجویز دی، جس کے بعد تقریباً 100 گوردواروں نے تصدیق کی کہ بھارتی حکام کی گوردواروں کے اندر سرگرمیوں پر پابندی عائد کی جا چکی ہے۔سکھ تنظیموں کا کہنا ہے کہ بھارتی حکام کو گوردواروں میں آنے کی اجازت ہے لیکن وہ اس پلیٹ فارم کو نریندر مودی حکومت یا ہندو انتہا پسندوں کے نظریات کے پرچار کے لیے استعمال نہیں کر سکتے۔ واضح رہے کہ کینیڈا کے گوردوارے پہلے ہی بھارتی حکام کے داخلے پر پابندی لگا چکے ہیں۔دوسری جانب یورپ کے 100 گوردواروں میں بھارتی حکام کے داخلے پر پابندی عائد کی جا سکتی ہے اور اگر اس تعداد میں کینیڈا، امریکا، آسٹریلیا، نیوزی لینڈ اور دیگر جگہوں کو بھی شامل کیا جائے تو بھارتی حکام کو دنیا بھر کے 300 سے زائد گوردواروں میں داخلے پر پابندی کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔