مقبول خبریں
انتخابات کے بعد ن لیگ اور پیپلز پارٹی سے اتحاد نہیں ہو سکتا: چیئرمین تحریک انصاف
مسئلہ کشمیرتسلیم شدہ بین الاقوامی کیس ، جسے حل کروانا اقوام متحدہ کی ذمہ داری :راجہ فارو ق حیدر
مسئلہ کشمیر پر سیاستدانوں سے حمایت کیلئے جموں کشمیر تحریک حق خود ارادیت کی سرگرمیوں میں تیزی
میرے ساتھ تب تک وفاداری کی جائے جب تک راہِ حق پر ہوں، عمران خان
مقبوضہ کشمیر :پلوامہ کے علاقے میں کانگریس کے سابق رہنماء غلام نبی پٹیل قتل
پیپلزپارٹی نوٹنگھم کے سابق صدر چوہدری علی شان پی پی پی برطانیہ کے نائب صدر منتخب
سلائو کی میئر عشرت شاہ کا لاہور میں اوور سیز پاکستانیز کمیشن پنجاب کے دفاتر کا دورہ
جموں و کشمیر تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کا ہنگامی آزادی ریاست جموں و کشمیر پلان
خواب جھلستے جاتے ہیں اک معصوم سی لڑکی کے
پکچرگیلری
Advertisement
ڈ اکٹر طاہر القادری کا 17 جنوری سے ملک گیر احتجاجی تحریک کا اعلان
لاہور: ڈ اکٹرطاہر القادری نے 17 جنوری سے ملک گیر احتجاجی تحریک کا اعلان کر دیا، کہتے ہیں رانا ثناء اللہ اور وزیر اعلیٰ پنجاب کے استعفے کا مطالبہ کیا تھا، ڈیڈ لائن کل ختم ہو چکی، مطالبہ پورا نہیں ہوا، اب استعفیٰ مانگیں گے نہیں، لیں گے۔طاہر القادری نے کہا کہ اب ان کی حکومت کا خاتمہ ہو گا، ایکشن کمیٹی کا پہلا اجلاس 11 جنوری کو ہو گا، ایکشن کمیٹی احتجاج کے مختلف امور کا جائزہ لے گی، قمر الزمان کائرہ، عبد العلیم خان، کامل علی آغا، شیخ رشید، ناصر شیرازی اور خرم نواز گنڈا پور کمیٹی میں شامل ہیں۔رہنماء پاکستان عوامی تحریک نے دعویٰ کیا کہ اب صرف شہباز شریف نہیں، ان کی کابینہ کا خاتمہ ہو گا، پوری نون لیگ کا خاتمہ اور ایک ایک جرم کا حساب ہو گا۔ انہوں نے سابق وزیر اعظم پر الزام عائد کیا کہ اپنی نااہلیت کو بچانے کیلئے انہوں نے ختم نبوت پر ڈاکہ مارا، حلف نامے میں تبدیلی میں ملوث افراد کو بھی بے نقاب کریں گے۔طاہر القادری نے یہ بھی کہا کہ ماڈل ٹاؤن میں بے گناہ لوگوں کا قتل عام کیا گیا، یہ انصاف کے حصول کی تحریک ہے۔