مقبول خبریں
ڈیبی ابراھم کیساتھ ناروا سلوک سے بھارت کا نام نہاد جمہوری چہرہ بے نقاب
مہنگائی کی ذمے دار عمران خان حکومت ہے ،شہباز شریف
دعوت اسلامی برمنگھم کے زیر اہتمام خراب موسم کے باوجودجشن عید میلاد النبیؐ کا جلوس
برطانوی شاہی جوڑے کی پاکستان میں زبردست پذیرائی، وزیر اعظم اور صدر مملکت سے ملاقاتیں
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
اسرار احمد راجہ کی کتاب کی تقریب رونمائی ،مئیر آف لوٹن کونسلر طاہر ملک ودیگرافراد کی شرکت
پارک ویو کمیونٹی سنٹر شہیر واٹر میں ہمنوا یو کے کے زیرِ اہتمام یوم آزادی پاکستان تقریب کا انعقاد
راجہ نجابت حسین کی ڈیبی ابراھام کے ہندوستان میں داخلے پر پابندی کی شدید مذمت
آتش فشاں
پکچرگیلری
Advertisement
شہرت کے بعد اچانک غائب ہوجانے والی بالی و وڈ اداکارہ امیشاء پٹیل
ممبئی: بولی وڈ میں ہر دور میں مسلسل نت نئے اداکار سامنے آتے رہتے ہیں جن میں کچھ کامیاب، کچھ ناکام اور کچھ سپر اسٹار بن جاتے ہیں، مگر کچھ ایسے بھی ہوتے ہیں جن کا آغاز بہت اچھا ہوتا ہے اور لگتا ہے کہ وہ بہت آگے جائیں گے مگر پھر وہ اچانک ہی کہیں گم ہوجاتے ہیں۔ امیشا پٹیل نے کہو ہے نا پیار ہے جیسی بلاک بسٹر کے ذریعے بولی وڈ میں تہلکہ خیز انداز میں قدم رکھا اور پھر غدر جیسی آل ٹائم ہٹ دی، انہوں نے اس فلم میں اپنی اداکاری پر کئی ایوارڈز بھی جیتے۔ اس کے بعد بھی وہ اچانک پردہ اسکرین سے غائب ہو گئیں۔مسلسل بلاک بسٹر فلمیں دینے اور بالی ووڈ انڈسٹری کی صف اول کی اداکاراؤں میں شامل ہونے کے بعد دراصل انہیں ایک مشکل صورتحال کا سامنا کرنا پڑا جب امیشا کا اپنے والد کے ساتھ اختلافات کا معاملہ سامنے آیا اور انہوں نے اپنے والد کے ساتھ 5 سال پر محیط طویل قانونی جنگ لڑی، انہوں نے الزام لگایا کہ ان کے والد نے سخت محنت سے کمایا گیا ان کا پیسہ جس کی مالیت 12 کروڑ بنتی ہے، ان سے دھوکے سے ہتھیا لیا ہے، کیس 5 سال تک چلا جس کے بعد امیشا نے کیس واپس لے لیا، اس سارے عرصے میں ان کو فلم ڈائریکٹر وکرم بھٹ کی معاونت حاصل رہی ۔اس طویل قانونی جنگ کی وجہ سے وہ فلم انڈسٹری سے دور ہوتی گئیں اور اس عرصے کے بعد انہوں نے مختلف کرداروں کیساتھ بالی ووڈ میں دوبارہ انٹری دی تاہم اب کی بار انہیں صرف سائیڈ رولز ہی مل سکے۔