مقبول خبریں
یورپی پارلیمنٹ کی انسانی حقوق کمیٹی کا مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں پر ہیئرنگ کا فیصلہ
بیسٹ وے گروپ کے سربراہ سرانور پرویز کی جانب سے کمیونٹی رہنمائوں کے اعزاز میں استقبالیہ
نبوت بھی اﷲ کی عطا ہے اور صحابیت بھی، نبوت بھی ختم ہے اور صحابیت بھی: ڈاکٹر خالد محمود
ملک دشمن عناصر دہشتگردی کے ذریعے پاکستان میں الیکشن سبوتاژ کرنا چاہتے ہیں:عمران خان
مقبوضہ کشمیر :بھارتی فوج نے نوجوان کا سر تن سے جدا کر دیا ،احتجاج،جھڑپیں
شیر خدا نے نبی پاک کی آواز پر لبیک کہہ کر اسلام سے محبت اور وفا کی عمدہ مثال قائم کی
پیپلزپارٹی ہی آئندہ انتخابات میں چاروں صوبوں میں اکثریت حاصل کریگی:میاں سلیم
مسئلہ کشمیر پرقوم کا نکتہ نظر اور قربانیاں رنگ لا رہی ہیں:جموں کشمیر تحریک حق خود ارادیت
نیا موسم تمہارا منتظر ہے۔۔۔۔۔۔۔۔
پکچرگیلری
Advertisement
سب مل کر بوسیدہ نظام کو بدلیں،قربانیاں دیں،ٹیکس دیں،ڈاکہ زنی نہ کریں:وزیر اعلیٰ شہباز شریف
لاہور:وزیر اعلیٰ پنجاب شہباز شریف نے کہا ہے کہ آئیں سب ملکر بوسیدہ نظام بدلیں، قربانیاں دیں،ٹیکس دیں ، ڈاکہ زنی نہ کریں تاکہ ملک کو فلاحی مملکت بنایا جاسکے ، دہشتگردی دم توڑ رہی ہے ، افواج پاکستان کے دہشتگردی کے خلاف میگا پلان میں ن لیگ کی حکومت نے بھرپور مدد دی۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے سہالہ پولیس ٹریننگ سنٹر میں پاسنگ آؤٹ پریڈ کی تقریب سے بطور مہمان خصوصی خطاب کرتے ہوئے کیا ۔اس موقع پر سپیکرپنجاب اسمبلی رانا اقبال،صوبائی وزیر کھیل جہانگیرخانزادہ،آئی جی پنجاب کیپٹن (ر)عارف نواز خان ،کمانڈنٹ پولیس کالج سہالہ احسان طفیل ،سابق ایم این اے ملک شکیل اعوان اور دیگر بھی موجودتھے ۔ شہبا ز شریف نے کہا کہ ہم 70 برس کے دوران وہ نظام نہیں لاسکے جس کے ذریعے سب کو ان کے حقوق ملیں۔آئیں ہم سب مل کر بوسیدہ نظام بدلیں اور پاکستان میں حقیقی معنوں میں فلاحی نظام لائیں۔پاکستان کو قرضوں سے جان چھڑا کر اپنے پاؤں پر کھڑا ہونا ہے ۔ خود انحصاری کی سوچ اپنالیں تو پاکستان عظیم ملک بنے گا۔ پاکستان کو آگے لے کر جانا ہے تو بھیک نہ مانگیں، قربانیاں دیں اور ٹیکس دیں۔ ملک کی دولت پر ڈاکہ زنی نہ کریں۔دہشتگردی کیخلاف جنگ میں 1400 اہلکار شہید ہو چکے ہیں، شہدا کا خون رنگ لائے گا۔ قوم کی قربانیوں سے آج ملک میں دہشتگردی دم توڑ رہی ہے ، ساڑھے چار سالوں میں افواج پاکستان نے دہشت گردی کے خاتمے کیلئے جو میگا پلان بنائے ہیں پاکستان مسلم لیگ(ن)کی حکومت نے اس میں بھرپور مدد دی۔ پھر قوم چٹان کی طرح متحد ہوئی ،اب ملک میں دہشتگردی دم توڑ رہی ہے ۔دہشتگردی کے خاتمے کے لئے مسلح افواج اورپولیس کے جوانوں نے خون کا نذرانہ پیش کیا ہے ۔یہ خون جرنیلوں،عدلیہ،سیاستدانوں، بیوروکریٹس کو پکار پکار کرکہہ رہا ہے کہ اس قربانی کو ضائع مت ہونے دینا۔خدارا اس ملک کو مزید بکھرنے مت دو۔ پنجاب پبلک سروس کمیشن نے 70 ہزار درخواستوں سے مکمل میرٹ پران286پولیس افسران کو منتخب کیا۔ ساڑھے نو سال میں پولیس کی بہتری کے لئے کئی سو ارب روپے خرچ کئے جو اس قوم کی خون پسینے کی کمائی ہے ،سی ٹی ڈی نے پنجاب میں دہشتگردوں کا مقابلہ کرکے ان کا خاتمہ کیا،سیف سٹی پراجیکٹ لاہور میں مکمل ہوا جس پر 13 ارب روپے خرچ کئے گئے ۔برطانیہ میں پولیس والا جب کسی کا چالان کرتا ہے تو سب سے پہلے وہ اسے سر کہتا ہے ، پھر لائسنس کا پوچھتا ہے ۔ لائسنس نہ ملنے پر وہ گاڑی کا نمبر نوٹ کرتا ہے اور اسے جانے دیتا ہے ،لیکن پاکستان میں اس کے برعکس ہے ۔انہوں نے کہاکہ پولیس کا فرض ہے ہر شخص کی عزت کرے اس کی بے توقیری نہ کرے ،چور کو تھانہ میں چوہدری نہ بنائیں،ملزم کو مظلوم نہ بنائیں،پنجاب پولیس کو ایک ڈسپلن فورس بننا ہو گا اور اب وہ وقت دور نہیں،جب اس پولیس کا نام دنیا میں ہو گا،پاکستان معاشی اور عسکری طور پر بہت بڑا ملک بنے گا،لاہور میں 20 ارب روپے سے گردوں اور جگر کا جدید ترین ہسپتال بنایا گیا ہے ،ایسا ہسپتال ملک میں کہیں نہیں ہے ،اگلے سال تک اس میں 1500بستروں تک توسیع دی جائے گی،اس ہسپتال کی تعمیر پر سارا پیسہ اپنا خرچ کیا،کسی ورلڈبینک،ایشین بینک یادوست ملک سے قرض نہیں لیا،خودمختار ملک بننے کے لئے قربانی دینا پڑتی ہے ، ملک کی دولت کو لوٹیں مت،اس کو عوام کی خدمت پر نچھاور کریں،قدرتی وسائل اللہ کی نعمت ہیں انھیں استعمال میں لائیں،یہ مشکل ضرور ہے مگرناممکن نہیں ہے ۔وزیراعلیٰ نے اپنی تقریر کے آخر میں یہ اشعار پڑھے ۔ جب اپنا قافلہ عزم و یقین سے نکلے گا … جہاں سے چاہیں گے رستہ وہیں سے نکلے گا وطن کی مٹی مجھے ایڑیاں رگڑنے دے … مجھے یقین ہے چشمہ یہیں سے نکلے گا