مقبول خبریں
24 اکتوبر کو 8 لاکھ سے زائد کشمیری نژاد برطانوی شہری یوم تاسیس آزاد کشمیر بھرپور طریقے سے منائینگے
دنیامیں القاعدہ کوکبھی بھی پاکستان کی مددکےبغیرشکست نہیں ہوسکتی تھی: میجر جنرل آصف غفور
دورے پرحکومت پاکستان،حکومت آزاد کشمیر اور راجہ نجابت کی معاونت کے مشکور ہیں:کرس لیزے
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
یورپ میں مسئلہ کشمیر کو مزید تیزی سے اجاگر کیا جائے گا: تحریک حق خودارادیت
زمین پر دیوار چین
پکچرگیلری
Advertisement
پاک چین اقتصادی راہداری کی وجہ سے پاکستان کی پوزیشن بہتر ہوئی ہے:سردار عتیق احمد خان
لندن، آزاد کشمیر کے سابق وزیراعظم سردار عتیق احمد خان نے برطانوی پارلیمنٹ کے کمیٹی روم میں خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ پاک چین اقتصادی راہداری کی وجہ سے پاکستان کی پوزیشن بہتر ہوئی ہے اور دنیا کی توجہ پاکستان کی طرف مبذول ہوئی ہے اور کشمیر کا مسئلہ فور فرنٹ پر آگیا ہے پاکستان جس قدر مضبوط اور مستحکم ہوگا اسی قدر کشمیر کے تنازعے کے حل کے لئے بہتر انداز میں پیش رفت ہوسکتی ہے۔ سردار عتیق احمد بریڈ فورڈ سے رکن آف پارلیمنٹ عمران جن کی جانب سے اپنے لئے منعقدہ ایک پروگرام سے برٹش ممبران آف پارلیمنٹ کرس لزلی، محمد یاسین، فیصل رشید اور لارڈ نذیر احمد کی موجودگی میں خطاب کر رہے تھے۔ سردار عتیق احمد کا کہنا تھا کہ بھارت بڑے پیمانے پر انسانی حقوق کی خلاف ورزیاں کر رہا ہے نوجوان بچوں کو شہید اور پیلٹ گنز کا بے دریغ استعمال کر رہا ہے اور نہتے کشمیریوں پر تشدد کر رہا ہے۔ برطانوی ممبران آف پارلیمنٹ کشمیری عوام پر ہونے والے مظالم بند کروانے کے لئے دباؤ ڈالیں اور بھارت کی زیادتیاں بند کروائیں۔ سردار عتیق احمد نے کہا کہ سابق صدر جنرل پرویز مشرف نے کشمیر پر واضح اور دو ٹوک مؤقف اختیار کیا تھا جبکہ موجودہ حکومت اپنے خود ساختہ مسائل سے دوچار ہے اور کشمیر پر کوئی لائحہ عمل دے نہیں سکی۔ سردار عتیق احمد خان نے کہا کہ خطے کو محفوظ بنانے کے لئے پاک افواج کا کردار دہشت گردی کی جنگ میں ناقابل فراموش اور مثالی ہے جسے دنیا میں تحسین کی نگاہ سے دیکھا جاسکتا ہے اس سے پہلے عمران حسین ایم پی نے میزبانی کے فرائض سرانجام دیتے ہوئے کہا کہ سردار عتیق احمد خان کو وہ پارلیمنٹ میں خیر مقدم کہتے ہیں کرس لزلی ایم پی نے کہا مسئلہ کشمیر پر ہماری ایک کمٹمنٹ ہے اور برطانیہ میں آباد کشمیریوں کے ساتھ ملکر ہم انسانی حقوق کی خلاف ورزیاں رکوانے کے لئے فعال کردار ادا کر رہے ہیں اور برٹش ممبران آف پارلیمنٹ کو مقبوضہ کشمیر میں ہونے والی انسانی حقوق کا ادراک ہے۔ لارڈ نذیر احمد نے کہا کہ کشمیر موجودہ مسلم لیگ کی حکومت کے ایجنڈے میں مودی سے بزنس روابط کی وجہ سے شامل نہیں ہے انہوں نے کہا کہ شاہد خاقان عباسی برائے نام وزیر اعظم ہیں جو کشمیر کاز کو نواز شریف سے تعلقات کی وجہ سے کوئی خاص اہمیت نہیں دے رہے ہیں۔ اس موقع پر مسلم کانفرنس کے برطانیہ کے رہنماؤں سمیت نوٹنگھم سے سردار جاوید عباسی، سردار عثمان عتیق، نوٹنگھم سے ہائی شرف صغیر راجپوت، حافظ نصر اللہ خان، چوہدری بشیر رٹوی، ممتاز بٹ، شبیر ملک، نوید منگا، حیات شاہین اور دیگر موجود تھے۔