مقبول خبریں
24 اکتوبر کو 8 لاکھ سے زائد کشمیری نژاد برطانوی شہری یوم تاسیس آزاد کشمیر بھرپور طریقے سے منائینگے
دنیامیں القاعدہ کوکبھی بھی پاکستان کی مددکےبغیرشکست نہیں ہوسکتی تھی: میجر جنرل آصف غفور
دورے پرحکومت پاکستان،حکومت آزاد کشمیر اور راجہ نجابت کی معاونت کے مشکور ہیں:کرس لیزے
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
یورپ میں مسئلہ کشمیر کو مزید تیزی سے اجاگر کیا جائے گا: تحریک حق خودارادیت
زمین پر دیوار چین
پکچرگیلری
Advertisement
جموں کشمیر تحریک حق خود ارادیت کے وفد کی حکمران جماعت کے چیئرمین سر پیٹرک سے ملاقات
ہالی فیکس:جموں وکشمیر تحریک حق خود ارادیت انٹرنیشنل کے وفد کی برطانیہ کی حکمران جماعت کے چیئرمین سر پیٹرک میکلا لئن سے ملاقات،وفد میں چیئرمین تحریک راجہ نجابت حسین،سر پرست سردار عبدالرحمان خان،ڈائریکٹر انتظامیہ ہیری بوٹا،یارکشائر کے چیئرمین چوہدری محمد اکرم،ثمینہ خان اورکشمیر میڈیا سروس کے ایگزیکٹو ڈائریکٹر شیخ تجمل الاسلام بھی شامل تھے،تحریک کے وفد نے یارکشائر سے کنزرویٹو پارٹی کے یورپی ممبر پارلیمنٹ امجد بشیر اور برطانوی وزیر کریگ و ہٹیکر ایم پی سے بھی اس موقع پر ملاقات کر کے کنزرویٹو پارٹی کے رہنمائوں کو برٹش کشمیریوں کی طرف سے خصوصی یادداشت بھی پیش کی جس میں برطانوی حکومت سے مطالبہ کیا گیا کہ وہ مسئلہ کشمیر کو اقوام متحدہ میں اٹھائے اور مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کے مظالم بند کروانے کیلئے اپنا اثر و رسوخ استعمال کریں جبکہ19جنوری کو برطانوی پارلیمنٹ میں پیش کردہ قرار داد پر بھی برطانوی حکومت عمل درآمد کرے،تحریک کے چیئرمین راجہ نجابت حسین نے زبانی طور پر بھی پارٹی چیئرمین کو کشمیریوں کے جذبات سے آگاہ کیا جبکہ اس موقع پر امجد بشیر ایم ای پی نے بھی برطانوی حکومت سے مطالبہ کیا کہ وہ یورپ سے نکلنے کے بعد بھارت سے ہونے والے معاہدوں کو مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیاں بند کروانے کیلئے مشروط کیا جائے،برطانوی وزیر کریگ و ہٹیکر ایم پی نے کہا کہ وہ ماضی میں بحیثیت کشمیر کے مسئلے پر تحریکی رہنمائوں سے مل کر آوار بلند کرتے رہے ہیں اور آئندہ بھی حکومت کے اندر کشمیریوں کا نکتہ نظر پہنچاتے رہیں گے،آزاد کشمیر سے آئے مقبوضہ کشمیر کے ممتاز رہنما شیخ تجمل الاسلام نے تفصیل سے کنزرویٹو مندوبین اور ممبران پارلیمنٹ کو مقبوضہ کشمیر میں پیلٹ گنز اور خواتین کی چوٹیوں کے کاٹنے کے واقعات سے آگاہ کیا اور کہا کہ بھارت کی طرف سے مقبوضہ کشمیر میں بھارت کے سابق فوجیوں اور مشرقی پنجاب کے مہاجرین کے مہاجرین کو آباد کرنے کیلئے بھارتی آئین میں مجوزہ تجویز کے حوالے سے مسئلہ کشمیر اوراقوام متحدہ کی قراردادوں کے متاثر ہونے کے بارے میں بھی آگاہ کیا،اس موقع پر ثمینہ خان نے مقبوضہ کشمیر میں خواتین پر ہونے والے مظالم سے حکمران جماعت کے رہنمائوں کی توجہ مبذول کروائی اور برطانوی حکومت سے انسانی حقوق کی پامالی کو برصغیر میں دونوں ایٹمی قوتوں کے درمیان چپقلش کی طرف خطرہ قرار دیا۔خصوصی رپورٹ:فیاض بشیر