مقبول خبریں
یو کے اسلامک مشن یوتھ ونگ لیڈز کی طرف سے عید ملن پارٹی :مسلم و نو مسلم کمیونٹیز کی شرکت
پیغام پاکستان فتویٰ دہشت گردی کیخلاف متفقہ قومی بیانیہ کا کردار ادا کرسکتا ہے: قاری صداقت علی
پیٹر برا کے سابق لارڈ میئر محمد ایوب کا پاک سر زمین پارٹی میں شمولیت کا اعلان
ٹکٹوں کی تقسیم پر ناراض کھلاڑیوں کا کپتان کی رہائشگاہ کے باہر احتجاج جاری
مقبوضہ کشمیر: بی جے پی کا اتحاد ختم کرنے کا اعلان، وزیراعلیٰ مستعفی
شیر خدا نے نبی پاک کی آواز پر لبیک کہہ کر اسلام سے محبت اور وفا کی عمدہ مثال قائم کی
پیپلزپارٹی ہی آئندہ انتخابات میں چاروں صوبوں میں اکثریت حاصل کریگی:میاں سلیم
جموں کشمیر تحریک حق خودارادیت کا نو منتخب کونسلروں میڈیا نمائندگان کے اعزاز میں افطار ڈنر
دشمنوں کے درمیان ایک کتاب
پکچرگیلری
Advertisement
بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی روہنگیا مسلمانوں کے زخموں پر مزید نمک چھڑکنے لگے
نئی دہلی/ نیپیدو: مسلم دشمنی میں اندھے بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی مسلمانوں پر ظلم ڈھانے والی حکومت کی پشت پناہی کرنے میانمار پہنچے، جہاں انہوں نے نوبیل انعام یافتہ آنگ سان سوچی کے ساتھ مشترکہ پریس کانفرنس میں روہنگیا مسلمانوں پر تشدد کو فورسز پر حملوں کا ردعمل قرار دیا۔ادھر روہنگیا مسلمانوں کا بے سروسامانی کی حالت میں زمینی، دریائی اور سمندری راستے سے بنگلا دیش پہنچنے کا سلسلہ بھی جاری ہے۔ 25 اگست سے اب تک 3 لاکھ بے بس لوگ بنگلا دیش پہنچ چکے ہیں۔ کئی خلیج بنگال کی بے رحم موجوں کا نشانہ بن گئے۔ بنگلا دیش پہنچنے والے روہنگیا مسلمانوں نے بتایا کہ بدھ کی صبح تین کشتیاں سمندر میں ڈوب گئیں جس میں 100 افراد سوار تھے۔ ان میں سے 6 لاشیں بہہ کر سمندر کنارے آ چکی ہیں جن میں بچے بھی شامل ہیں۔ دوسری جانب میانمار کی فوج سرحدوں پر بارودی مواد نصب کر رہی ہے تا کہ روہنگیا مسلمان واپس نہ آ سکیں۔ بنگلا دیش نے سرحد پر بارودی سرنگیں نصب کرنے پر احتجاج کیا ہے۔