مقبول خبریں
پاکستانی و کشمیری برطانوی شہریوں کا تمام شعبہ جات میں نمایاں مقام باعث فخر ہے:افضل خان
عمران خان خود اپنی پارٹی کیلئے باعثِ شرمندگی ہے : ڈاکٹر اشرف ،ملک ریاض،شاکرقریشی
پاکستان میں فٹبال کے فروغ کیلئے انٹرنیشنل سوکا فیڈریشن کا قیام، ٹرنک والا فیملی کو خراج تحسین
وزارتِ عظمیٰ کے بعد نواز شریف مسلم لیگ ن کی صدارت سے بھی فارغ
بھارتی ریاستی دہشتگردی کیخلاف مقبوضہ کشمیر میں ہڑتال، تعلیمی ادارے بند
کشمیر میں جاری انسانی حقوق کی پامالیوں کو رکوانے کے سلسلہ میں پروگرام کا انعقاد
اوورسیز پاکستانیز ویلفیر کونسل کے زیراہتمام یوم یکجہتی کشمیر پر کار ریلی کا انعقاد
راجہ نجابت اور ان کی ٹیم کامسئلہ کشمیرپر متحرک کردار قابل ستائش ہے: سٹوورٹ اینڈریو
عمران خان مارگریٹ اور میں
پکچرگیلری
Advertisement
بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی روہنگیا مسلمانوں کے زخموں پر مزید نمک چھڑکنے لگے
نئی دہلی/ نیپیدو: مسلم دشمنی میں اندھے بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی مسلمانوں پر ظلم ڈھانے والی حکومت کی پشت پناہی کرنے میانمار پہنچے، جہاں انہوں نے نوبیل انعام یافتہ آنگ سان سوچی کے ساتھ مشترکہ پریس کانفرنس میں روہنگیا مسلمانوں پر تشدد کو فورسز پر حملوں کا ردعمل قرار دیا۔ادھر روہنگیا مسلمانوں کا بے سروسامانی کی حالت میں زمینی، دریائی اور سمندری راستے سے بنگلا دیش پہنچنے کا سلسلہ بھی جاری ہے۔ 25 اگست سے اب تک 3 لاکھ بے بس لوگ بنگلا دیش پہنچ چکے ہیں۔ کئی خلیج بنگال کی بے رحم موجوں کا نشانہ بن گئے۔ بنگلا دیش پہنچنے والے روہنگیا مسلمانوں نے بتایا کہ بدھ کی صبح تین کشتیاں سمندر میں ڈوب گئیں جس میں 100 افراد سوار تھے۔ ان میں سے 6 لاشیں بہہ کر سمندر کنارے آ چکی ہیں جن میں بچے بھی شامل ہیں۔ دوسری جانب میانمار کی فوج سرحدوں پر بارودی مواد نصب کر رہی ہے تا کہ روہنگیا مسلمان واپس نہ آ سکیں۔ بنگلا دیش نے سرحد پر بارودی سرنگیں نصب کرنے پر احتجاج کیا ہے۔