مقبول خبریں
روہنگیا مسلمانوں کی مذہب کے نام پر نسل کشی قابل قبول نہیں: افضل خان
اوورسیز پاکستانی کا ایک کروڑ روپے مالیت کا مکان ناجائز قبضہ سے چھڑالیاگیا
ڈاکٹر افضل جاوید ورلڈ سائیکائیٹرک ایسوسی ایشن (WAP) کے صدر منتخب
ہر ادارہ اپنے دائرے میں کام کرے تو ملک ترقی کرے گا: وزیر داخلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی جبرکیخلاف مکمل ہڑتال، زبردست احتجاجی مظاہرے
لوٹن ٹائون ہال میں ادبی بیٹھک، لارڈ قربان نے صدارت کی معروف شعرا کرام کی شرکت
برطانیہ کے ساحلی شہر سائوتھ ہیمپٹن میں ملی نغموں کی گونج، ڈپٹی میئر کی خصوصی شرکت
پاکستانی کمیونٹی سنٹر مانچسٹر میں کبوتر پروری کا سالانہ کنونشن، تقسیم انعامات کی تقریب
مودی کی سبکی
پکچرگیلری
Advertisement
جموں کشمیر نیشنل انڈی پینڈس الائنس کے زیر اہتمام کانفرنس کا انعقاد
برنلے:جموں کشمیر نیشنل انڈی پینڈس الائنس کے زیر اہتمام ایک کانفرنس بعنوان ’’ آزاد کشمیر کتنا آزاد ہے ‘‘ منعقد کی گئی جس میں ریاست جموں و کشمیر سے تعلق رکھنے والی مختلف آزادی پسند تنظیموں کے نمائندوں نے شرکت کی،کانفرنس کے اغراض و مقاصد بیان کرتے ہوئے الائنس کے چیئرمین محمود کشمیری نے کہا کہ یکم جولائی کو بریڈ فورڈ میں صدر آزاد کشمیر سے حکومت آزاد کشمیر کے اختیارات کے بارے میں بات کرنا چاہتے تھے لیکن انہوں نے بات سننے سے انکار کر دیا جس کی وجہ سے الائنس نے اس کانفرنس کے انعقاد کا فیصلہ کیا تاکہ ریاست جموں کشمیر کے عوام کو یہ باور کرایا جا سکے کہ جس خطہ کو وہ آزاد سمجھتے ہیں اس میں عوام اور انکے حکمرانوں کو کتنی آزادی حاصل ہے انہوں نے کہا کہ ایکٹ 1974کے نافذ ہونے کے بعد مظفر آباد حکومت کو اپنے وسائل پر کوئی اختیار نہیں جبکہ گلگت بلتستان جو تاریخی آئینی اور قانونی اعتبار سے ریاست کا حصہ ہیں گزشتہ ستر برس قبل آزاد کشمیر سے کوئی رابطہ سڑک نہیں بنائی گئی ۔