مقبول خبریں
برطانوی معاشرے میں رہتے ہوئے تمام تہوار میں حصہ لینا چاہئے: افضل خان
سپینش شہریت کے حامل سائنسدانوں کی قدرتی آفات پر ریسرچ
پاکستان میں فٹبال کے فروغ کیلئے انٹرنیشنل سوکا فیڈریشن کا قیام، ٹرنک والا فیملی کو خراج تحسین
لودھراں نے ثابت کیا فیصلے امپائر کی انگلی نہیں عوام کے انگوٹھے کرتے ہیں:نواز شریف
بھارتی ریاستی دہشتگردی کیخلاف مقبوضہ کشمیر میں ہڑتال، تعلیمی ادارے بند
کشمیر میں جاری انسانی حقوق کی پامالیوں کو رکوانے کے سلسلہ میں پروگرام کا انعقاد
اوورسیز پاکستانیز ویلفیر کونسل کے زیراہتمام یوم یکجہتی کشمیر پر کار ریلی کا انعقاد
راجہ نجابت اور ان کی ٹیم کامسئلہ کشمیرپر متحرک کردار قابل ستائش ہے: سٹوورٹ اینڈریو
کیا یورپ ٹوٹ رہا ہے ؟
پکچرگیلری
Advertisement
بیرون ممالک بسنے والوں کو ووٹ کا حق دیا جائے:سید عبدالباسط شاہ مشوانی
اولڈہم:پاکستان قومی اسمبلی کے پارلیمنٹری بورڈ نے بیرون ممالک بسنے والے پاکستانیوں کو عام انتخابات میں طویل عرصہ سے بحث و مباحثہ کے بعد ووٹ دینے اور الیکشن میں حصہ نہ لینے بارے فیصلہ کر کے ہمیں سخت مایوسی اور ذہنی کرب میں مبتلا کیا ہے،بیرون ممالک خصوصاً برطانیہ بھر میں بسنے والے مادر وطن کے سپوت پاکستان کی معیشت کی مضبوطی میں فعال اور مرکزی کردار ادا کرتے ہیں،ان کے ساتھ آگے ہی طرح طرح کے ظلم و ستم کئے جاتے ہیں اور جب ہم یہ آس لگائے بیٹھے تھے کہ ہم یہاں سے بیٹھ کر مادر وطن کے جمہوری عمل میں حصہ لے کر ملک کی ترقی،خوشحالی اور فرسودہ نظام سے مکمل چھٹکارا حاصل کرنے کیلئے اپنا بھرپور کردار ادا کریں گے لگتا یہی ہے کہ ایک سوچے سمجھے منصوبے کے تحت ایسا کیا گیا ہے تاکہ روایتی سیاست کو ختم کرنے میں بیرون ممالک بسنے والے کردار ادا نہ کر سکیں،ان خیالات کا انتہائی دکھ کے ساتھ اظہار تحریک انصاف برطانیہ کے سیکرٹری جنرل سید عبدالباسط شاہ مشوانی نے اس مایوس کن فیصلہ کے بعد میڈیا سے خصوصی طور پر بات چیت کرتے ہوئے کیا،انہوں نے مزید کہا کہ موجودہ حکومت پچھلے چار سال سے اس مسئلہ کا حل نکالنے کیلئے کام کر رہی تھی لیکن غیر سنجیدگی کا مظاہرہ کرتے ہوئے اس میں حائل رکاوٹوں کو جان بوجھ کر دور نہیں کیا گیا،دو وجوہات ہو سکتی ہیں حل کرنے میں عدم دلچسپی یا پھر پارلیمنٹری بورڈ کے افراد اتنے اہل نہیں تھے کہ وہ بنیادی مسئلہ کو حل کر سکیں،انہوں نے مزید کہا کہ ہمارے دل سخت رنجیدہ ہیں بیرون ممالک بسنے والوں کو ووٹ کا حق دیا جائے اور اس سلسلے میں تمام جماعتوں کو اعتماد میں لیا جائے تاکہ اس کا کوئی بہتر حل ممکن ہو سکے وگرنہ ہم بھرپور احتجاج کا حق رکھتے ہیں۔خصوصی رپورٹ:فیاض بشیر