مقبول خبریں
پاکستان کے نظریاتی استحکام کیلئے مسلم لیگ کو منظم کرنا وقت کی اہم ضرورت ہے:فدا حسین کیانی
گوادر چیمبر آف کامرس کے نومنتخب صدر گوادر رئیل اسٹیٹ کیلئے اثاثہ ثابت ہونگے: ذیشان چوہدری
کشمیری آزادی کی جنگ لڑ رہےہیں ،یہ انکا پیدائشی حق ہے:چوہدری جاوید ،چوہدری یعقوب
نواز شریف کے دوبارہ پارٹی صدر بننے کی راہ ہموار، شق 203 سینیٹ سے بھی منظور
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فورسز کی فائرنگ، مزید 2 نوجوان شہید
کونسلر وحید اکبر کا آزاد کشمیر کے جسٹس شیراز کیانی کے ا عزاز میں عشائیے کا اہتمام
برطانیہ کے ساحلی شہر سائوتھ ہیمپٹن میں ملی نغموں کی گونج، ڈپٹی میئر کی خصوصی شرکت
ڈاکٹر سجاد کریم کی قیادت میں یورپی پارلیمنٹ کے وفد کا جارحیا پہنچنے پرپرتپاک استقبال
کرپٹ خان
پکچرگیلری
Advertisement
دہشگرد برطانوی کثیرالثقافتی شناخت کو نہِں چھین سکتے:سابق میئر کونسلر ٹیری ویلر
لندن ... انڈین مسلم فیڈریشن، لیٹن سٹون کی جانب سے سالانہ عید تقریب سے خطاب کرتے ہوےٰ فیڈریشن کے چییر میں شمس الدین آغا نے اپنے استقبالیہ خطاب میں کہا کہ اس سال وہ عید یہ تقریب سادگی سے اس لیےٰ منا رہے ہیں تاکہ مانچسٹر، سنٹرل لندن اور فنزبری پارک میں دہشتگردی کے واقعات میں ہم سے جدا ہو نانیوالے برطانویوں اور انکےغمزدہ خاندانوں کے ساتھ اپنی یکجہتی کا اظہار کر سکیں۔ لہزا آج اس تقریب میں ہم تفریحی پروگرام شامل نہیں کر رہے۔ انہوں نے کہا کہ دہشتگردی کے یہ واقعات اگرچہ ہماری قومی یکجہتی پر بڑے حملے تھے، لیکن دہشتگرد ہمارے حوصلے پست کرنے میں کامیاب نہیں ہو سکیں گے۔ انہوں نے مزید کہا کہ تمام مذاہب انسان دوستی کا درس دیتے ہیں، لیکن بدقسمتی سے انہی مذاہب سے عقیدت کے دعویداروں میں مٹھی بھر عناصر، اپنے مذموم عزایم کی تکمیل کیلیےٰ شدت پسندی کی طرف مایل ہوجاتے ہیں، جس کی روک تھام کیلیےٰ تمام مذاہب کے لیڈروں کو مل کر ایک مشترکہ لایحہّ عمل مرتب کرنا ہوگا۔ والدین کو اپنے بچوں کے رویوں اور مشاغل سے باخبر رہنا ہوگا کہ کہیں کویٰ شدت پسندی کی طرف مایل تو نہیں ہو رہا۔ تمام عباتگاہوں، خصوصاً جہاں درس و تدریس بھی ہو رہی ہو، وہاں کا سلیبس اور انداز تدریس کا برطانوی قانون سے ہم آہنگ کیا جانا از حد ضروری ہے۔ لندن بارو آف والتھم فاریسٹ کے کاوّنسلر ٹیری ویلر ، جو بارو کے مییر کی بھی نماییندگی کر رہے تھے، نے نصف صدی پر محیط انڈین مسلم فیڈریشن کی خدمات کو سراہتے ہوےّ، اپنے مکلمل تعاون کا یقین دلایا۔ دہشتگردی کے حالیہ واقعات اور چہروں پر تیزاب پھینکنے کی وارداتوں کو بزدلانہ اور جاہلانہ قرار دیتے ہوےٰ کاوّنسلر ٹیری ویلر نے کہا کہ اس طرح کی انسانیت سوز وارداتوں سے برطانوی معاشرے کے حسن کو مسخ نہیں کیا جا سکتا جو کثیرالثقافتی اقدار پر قایم ہے۔ ہم بطور برطانوی اس بات پر فخر کرتے ہیں کہ ہمارا معاشرہ مختلف رنگ ، نسل، قومیتی، مذہبی اور ثقافتی پس منظر رکھتا ہے۔ یہی ہماری طاقت بھی ہے۔ کاوّنسلر ویلر نے اس ادارے سے اپنی وابستگی کا اظہار کرتے ہوےّ اپنے مخصوص انداز میں حاضرین پہ یہ واضع کیا کہ وہ اس تقریب میں دو حیثیتوں میں آےٰ ہیں، ایک اپنی ذاتی حیثیت میں، جس کیلیےٰ وہ ہر سال کی طرح اس سال بھی مدعو تھے، دوسرے وہ مییر اّف دی کاوّنسل کی بھی نمانندگی کر رہے ہیں، جو کسی وجہ سے شامل نہیں ہو سکے اور انہوں نے ان سے پنی نماییندگی کیلیےٰ کہا تھا۔ کاوّنسلر ناہید اصغر نے فیڈریشن کی زیر تعمیر نیٰ بلڈنگ کی جلد تکمیل کیلیےٰ نیک خواہشات کا اظہار کیا۔ فیڈریشن کی ہمت، اور ہر حال میں خدمات کی بہم رسانی جاری رکھنے کے جذبے کی تعریف کی۔ انہوں نے کہا کہ جس طرح یہ تنظیم بغیر کسی مالی مشکلات میں شروع ہویٰ، اور پھر آہستہ آہستہ اپنا ہال اور عمارت حاصل کرنے میں کامیاب ہویٰ، جہاں سے طرح طرح کے تعلیمی، ادبی اور تفریحی مشاغل جاری رہے اور اب جب وہ بلڈنگ توسیع و تجدید کیلیےٰ بند ہے، لیکن کمیونٹی سے اس تنظیم کا رابطہ مسلسل قایم ہے۔ انکی اس ہمت اور جزبے کی جتنی تعریف کی جاےٰ کم ہے اور ایسی پرعزم تنظیم کی دعوت پر آج یہاں آنا میرے لیےٰ بہت فخر کی بات ہے۔ یہ سادہ مگر پروقار تقریب مشرقی لندن کے ایک ہال میں پیش کی گیٰ جس میں سلطنت بیان، فلپایین کے اعزازی سفیر داتواں سلطان شوکت نوازخان، معروف سماجی شخصیات ڈاکٹر جاوید شیخ اور جناب قادر بخش کے علاوہ دیگر علمی و ادبی شخصیات کی ایک کثیر تعداد نے شرکت کی۔ اس تقریب کی ایک انفرادیت یہ تھی کہ اس خالصتاً مسلمانوں کی تقریب میں ہندو اور دیگر مذاہب کے پیروکار بھی مدعو تھے جن کیلیےٰ ا نکے مذہبی عقاید کے مطابق کھانے بھی مینو کا حصہ تھے۔ یہ ایک بہتر، پرامن اور بھاییچارے پر مبنی معاشرے کے قیام کیلیےٰ اس تقریب کا انتہایّ قابل قدر اور خوبصورت پہلو تھا۔ جو یقیناً شدت پسندی، تعصب اور دہشتگردی جیسے منفی رویوں کے ناسور کو شکست دینے کا انتہایّ موثر ذریعہ ثابت ہو سکتا ہے۔ تقریب کی نظامت مہتاب آغا نے کی، جبکہ آغاز نوجوان قاری حافظ حذیفہ نے تلاوت قران پاک سے کیا۔ فیڈریشن کے سیکریٹری جناب عرفان مصطفے نے مہمانوں کا شکریہ ا دا کیا اور ابھرتی ہویٰ موسیقار اور ایم بی بی ایس کی ہونہار طالبہ قدسیہ بانو آغا شاہ نے مہمان کاوّنسلر ناہید اصغر کو پھولوں کا گلدستہ پیش کیا ۔