مقبول خبریں
برادری ازم پر یقین رکھتے ہیں اور نہ علاقائی تعصب پر اہلیت کی بنیاد پر ڈاکٹر شاہد کی حمائت کر رہے ہیں
اسلام میں جسطرح خدمت انسانی کی حوصلہ افزائی کی گئی اسکی مثال نہیں ملتی: الصف چیریٹی کی امدادی تقریب
لالچی اور خودغرض ٹور آپریٹرز ں نے اللہ کے مہمانوں سے لوٹ کھسوٹ کا بازار گرم کر رکھا ہے
احتجاج کرنیوالے وزیر اعظم ہائوس آ کر مذاکرات کریں، نواز شریف
کشمیریوں نے بھارت کو بتا دیا وہ جدو جہد آزادی سے پیچھے نہیں ہٹیں گے،علی گیلانی
شیراز خان کی برطانیہ واپسی پر چیئرمین سلطان باہو پیر نیازالحسن سروری قادری کی والدہ کی وفات پر تعزیت
کشمیری اس امر پر متفق ہیں کہ ووٹ انہی کو دیا جائے گا جوحق خود ارادیت کی حمائت کرتے ہیں:کونسلر محبوب بھٹی
برطانیہ میں مقیم کمیونٹی پاکستان سے بے پناہ محبت کرتی ہے، . لارڈ میئر بریڈفورڈکا چھچھ ایسوسی ایشن تقریب سے خطاب
حکومت پنجاب کا اوورسیز کمشنر آفس
پکچرگیلری
Advertisement
ای یو فرینڈزآف پاکستان گروپ جی ایس پی پلس اسٹیٹس کیلئے پرعزم ہے: چیئرمین گروپ سجاد کریم
سٹراس برگ ... یورپی پارلیمنٹ میں فرینڈز آف پاکستان گروپ کے بانی چیئرمین سجاد حیدر کریم ایم ای پی سے گورنر پنجاب محمد سرور اور پاکستان کے وزیر مملکت برائے تجارت خرم دستگیر نے ملاقات کی جس میں یورپی یونین اور پاکستان کے درمیان تعلقات مزید مستحکم کرنے کے حوالے سے تبادلہ خیالات کیا گیا۔ اس موقع پر یورپی یونین میں پاکستانی سفیت منور سعید بھٹی اور وفاقی سیکریٹری کامرس قاسم نیاز بھی موجود تھے۔ سجاد کریم ایم ای پی نے کہا کہ گورنر پنجاب اور وزیرمملکت برائے تجارت خرم دستگیر خاں کے ساتھ ہم نے یورپی یونین اور پاکستان کے درمیان تعلقات کومزید مضبوط اور مستحکم کرنے کے حوالے سے دوستانہ تبادلہ خیال کیا انھوں نے کہا کہ یورپی یونین پاکستان سے سب سے زیادہ اشیا درآمد اور تجارت کرتا ہے تاہم جی ایس پی پلس پر عملدرآمد شروع ہونے کے بعد اس میں مزید اضافہ ہوجائے گا۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ فرینڈز آف پاکستان گروپ اور پاکستان کے سفیر بھٹی 2010 کے سیلاب زدگان کی امداد اور یورپی یونین اور پاکستان کے دمیان تعاون کے پنج سالہ منصوبے کی حمایت اورجی ایس پی پلس کے ذریعہ قریبی تعلقات کے قیام کیلئے کوشاں ہیں۔ یورپی یونین کی جانب سے پاکستان کی ترقی وخوشحالی کیلئے تعاون اورامداد کیلئے یورپی یونین اب زیادہ توجہ دے رہی ہے،انھوں نے کہا کہ مجھے خوشی ہے کہ پاکستان میں چوہدری سرور اور دستگیر خاں جیسے لوگ موجود ہیں جو دونوں ملکوں کے باہمی مفاد میں مل جل کرکام کرنے کی اہمیت کوسمجھتے ہیں، برطانیہ کی کنزرویٹو پارٹی سے تعلق رکھنے والے رکن پارلیمنٹ اور ان کا فرینڈزآف پاکستان گروپ پاکستان کوجی ایس پی پلس کا حصہ بنانے کی پرزور تائید کرتا ہے کیونکہ اس کے ذریعہ یورپی منڈیوں تک زیادہ وسیع تر رسائی ممکن ہوسکے گی۔