مقبول خبریں
او پی ایف بورڈ آف ڈائریکٹرز کے چیئرمین بیرسٹر امجد کا صحافیوں کے اعزاز میں عشائیہ
ہم دھرنوں کے باوجود عوام کی توقعات پر پورا اترے ہیں:میاں نواز شریف
پاک برٹش انٹر نیشنل ٹرسٹ کے چیئرمین چوہدری سرفراز کی جانب سے عشائیہ کی تقریب
چین کی لائٹ انجینئرنگ صنعتوں کی منتقلی سے ڈھائی کروڑ ملازمتیں پیدا ہونگی:وزیر داخلہ
مقبوضہ کشمیر:بھارتی فوج نے کشمیریوں پر زندگی تنگ کر دی،مزید 3بے گناہ شہید
لوٹن ٹائون ہال میں ادبی بیٹھک، لارڈ قربان نے صدارت کی معروف شعرا کرام کی شرکت
برطانیہ کے ساحلی شہر سائوتھ ہیمپٹن میں ملی نغموں کی گونج، ڈپٹی میئر کی خصوصی شرکت
صدر نارتھ زون ضمیر احمد کی زیرصدارت نیل مسجد (یوکے آئی ایم) میں نورانی محفل کا انعقاد
مودی کی سبکی
پکچرگیلری
Advertisement
اب بھارت کشمیریوں کو مزید غلامی کی زنجیر میں جھکڑ نہیں سکتا:ڈاکٹر مسفر حسن
برنلے:مقبوضہ کشمیر میں بھارتی جارحیت انتہا کی بلندیوں کو چھو رہی ہے،رمضان المبارک کے آغاز پر ایک سوچی سمجھی گھنائونی سازش کے تحت کشمیری نوجوانوں کو شہید کر دیا اور انسانیت سوز کارروائیوں کی نئی تاریخ رقم کر دی ایسے میں عالم اقوام،پاکستان کی حکومت،اقوام متحدہ اور انسانی حقوق کی علمبردار تنظیموں کی طرف سے سرد مہری اور دوہرے معیار کی پالیسی تکلیف دہ ہے،کشمیریوں کو پیدائشی حق خود ارادیت کی پاداش میں سزا دی جا رہی ہے اور اس سے زیادہ ستم ظریفی یہ ہے کہ بجائے ہم وسائل سے مالا مال کشمیری اس کے خلاف ٹھوس اور جاندار بنیادوں پر ایک ایسا لائحہ عمل مرتب کریں اور آواز اٹھائیں جو دنیا بھر کا ضمیر جھنجوڑ کر اسے جگانے کا کام کرے اپنی ذات کا پرچار کرنے کیلئے ہمہ تن مصروف عمل ہیں جو کہ ہم سب کے لئے لمحہ فکریہ ہے،ان خیالات کا اظہار جموں و کشمیر لبریشن لیگ برطانیہ و یورپ کے کنوینئر و صدر ڈاکٹر مسفر حسن نے مقبوضہ کشمیر کی موجودہ انتہائی کشیدہ صورتحال کے پیش نظر میڈیا سے بات چیت کے دوران کیا،انہوں نے مزید کہا کہ دنیا بھر میں مفادات کی خاطر رسی کشی کا کھیل شروع ہے اگر سنجیدگی سے تمام معاملات کو حل نہ کیا گیا تو بد امنی مزید پھیلنے کا خدشہ موجود ہے انتہائی ضروری ہے کہ کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جائے اور بھارتی سرکار پر دبائو ڈالا جائے کہ مقبوضہ کشمیر میں جاری وحشیانہ انسانیت سوز کارروائیاں فی الفور بند کی جائیں اب بھارت کشمیریوں کو مزید غلامی کی زنجیر میں جھکڑ نہیں سکتا اسکا فوری حل بھارت کے مفاد میں ہے۔خصوصی رپورٹ:فیاض بشیر