مقبول خبریں
روہنگیا مسلمانوں کی مذہب کے نام پر نسل کشی قابل قبول نہیں: افضل خان
اوورسیز پاکستانی کا ایک کروڑ روپے مالیت کا مکان ناجائز قبضہ سے چھڑالیاگیا
ڈاکٹر افضل جاوید ورلڈ سائیکائیٹرک ایسوسی ایشن (WAP) کے صدر منتخب
ہر ادارہ اپنے دائرے میں کام کرے تو ملک ترقی کرے گا: وزیر داخلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی جبرکیخلاف مکمل ہڑتال، زبردست احتجاجی مظاہرے
لوٹن ٹائون ہال میں ادبی بیٹھک، لارڈ قربان نے صدارت کی معروف شعرا کرام کی شرکت
برطانیہ کے ساحلی شہر سائوتھ ہیمپٹن میں ملی نغموں کی گونج، ڈپٹی میئر کی خصوصی شرکت
پاکستانی کمیونٹی سنٹر مانچسٹر میں کبوتر پروری کا سالانہ کنونشن، تقسیم انعامات کی تقریب
مودی کی سبکی
پکچرگیلری
Advertisement
پاکستان کے حکمران مسئلہ کشمیر کے حل کے لئے سنجیدہ نہیں ہیں: شاہد خالق
سٹوک آن ٹرنٹ:سرحد کے اس پار مقبوضہ کشمیر میں تحریک آزادی کشمیر پہلے سے زیادہ شدت اختیار کر چکی ہے ایسے میں بھارتی سکیورٹی فورسز کی جارحیت،انسانیت سوز اور عورتوں کی عصمت دری کے واقعات عالم اقوام کے ساتھ ساتھ اقوام متحدہ اور انسانی حقوق کی علمبردار تنظیموں کیلئے لمحہ فکریہ اور سوالیہ نشان ہے کہ اس دوہرے معیار کی منطق سمجھ سے بالا تر ہے بھارت جو اپنے آپ کو جمہوریت کا چیمپئن کہلاتا ہے اس کی آڑ میں ان کا گھنائونا کردار اور بیرونی طاقتوں کی لب کشائی خطہ میں مزید عدم استحکام پیدا کر رہا ہے اور ایسے میں حکومت پاکستان کا کردار سرد مہری کا شکار ہے بلکہ اپنے ذاتی مفادات کو تحفظ دینے کیلئے وہ بھارت سرکار کے ساتھ ملکر ایک ایجنڈے پر کام کر رہے ہیں جس سے تحریک آزادی کشمیر کو سرد خانے میں ڈالنے کی بو آ رہی ہے،یہ باتیں جموں وکشمیر نیشنل عوامی پارٹی برطانیہ برانچ سٹوک آن ٹرنٹ یونٹ کے صدر شاہد خالق نے میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کیں،انہوں نے مزید کہا کہ پاکستان کے حکمران مسئلہ کشمیر کے حل اور مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم کے خلاف آواز اٹھانے میں سنجیدہ نہیں ہیں اسی لئے عالمی سطح پر سفارت کاری انتہائی کمزور ہے بلکہ وہ گلگت،بلتستان کو پاکستان کا صوبہ بنانے کیلئے مصروف عمل ہیں انہیں جان لینا چاہئے کشمیری قوم ایسا کبھی نہیں ہونے دے گی،کشمیر کے حصے کو سازش کے تحت ایسا کرنا مکروہ فعل ہے ناکامی مقدر بنے گی۔خصوصی رپورٹ:فیاض بشیر