مقبول خبریں
راجہ طاہر مسعود کو ملکہ برطانیہ کی طرف سے کمیونٹی کی خدمات پر برٹش ایمپائر میڈل سے نوازا گیا
برطانیہ میں پاکستانی ہائی کمشنر کی جانب سے پاکستانی کمیونٹی کیلئے عید الفطر اوپن ہائوس کا اہتمام
مسلم ہینڈز انٹرنیشنل کی جانب سے شامی تارکین وطن کیلئے خوراک کا کانوائے روانہ کر نے کی تقریب
چیئرمین تحریک انصاف عمران خان بھی کروڑوں روپے کے اثاثوں کے مالک
محبوبہ مفتی کی حکومت ختم، صدر رام ناتھ کووند نے گورنر راج نافذ کر دیا
شیر خدا نے نبی پاک کی آواز پر لبیک کہہ کر اسلام سے محبت اور وفا کی عمدہ مثال قائم کی
پیپلزپارٹی ہی آئندہ انتخابات میں چاروں صوبوں میں اکثریت حاصل کریگی:میاں سلیم
پاکستان کشمیر ویلفیئر ایسوسی ایشن کے ڈائریکٹر پروفیسر فیاض رشید و دیگر کا عید ملن پارٹی کا اہتمام
وصال و ہجر کا قصہ بہت پرانا ہے
پکچرگیلری
Advertisement
پاکستان کے ہائی کمشنر سےپی بی بی سی کے وفد کی جولین ہیملٹن کی زیرقیادت ملاقات
لندن:پاکستان بریٹین بزنس کونسل (پی بی بی سی) کے وفد نے چیئرمین جولین ہیملٹن کی زیرقیادت برطانیہ میں پاکستان کے ہائی کمشنر سید ابن عباس سے ان کے دفتر میں ملاقات کی۔ چیئرمین پی بی بی سی نے ہائی کمشنر کو دو اہم تجارتی سرگرمیوں کے بارے میں آگاہ کیا جن کا اہتمام پی بی بی سی مستقبل قریب میں کر رہی ہے۔ ایک ’’ڈوئنگ بزنس ان پاکستان‘‘ ہے جو 18 جنوری 2017 کو گلاسکو میں سکاٹش گورنمنٹ اور پاکستان ہائی کمیشن لندن کی مدد سے منعقد ہو گی جبکہ دوسری سرگرمی مارچ 2017 میں سابق برطانوی سیکرٹری خارجہ جیک سٹرا کی زیرقیادت ایک اعلیٰ اختیاراتی تجارتی وفد پاکستان بھیجنے کے بارے میں ہے۔ پی بی بی سی کے وفد نے ہائی کمشنر کو گلاسکو کی تقریب ’’ڈوئنگ بزنس ان پاکستان‘‘ میں اظہار خیال کی دعوت دی۔ ہائی کمشنر نے پی بی بی سی کی اس کاوش میں بھرپور دلچسپی کا اظہار کیا اور ان سرگرمیوں کو کامیاب بنانے میں حکومت پاکستان کے ہر ممکن تعاون کی یقین دہانی کرائی۔ بعد ازاں کامن ویلتھ الائنس آف ینگ انٹریپرینیورز (سی اے وائی ای) ایشیا کا وفد اپنے صدر شعبان خالد کی زیرقیادت ملاقات میں شامل ہو گیا۔ سی اے وائی ای کے وفد نے بھی پی بی بی سی کے مجوزہ تجارتی وفد کے لئے اپنی حمایت کا اظہار کیا۔ ہائی کمشنر نے کہا کہ ینگ انٹریپرینیورز پاکستانی معیشت میں مثبت تبدیلی لانے کی صلاحیت رکھتے ہیں۔ انہوں نے پاکستان اور برطانیہ کے درمیان بہتر کمرشل تعلقات کے مشترکہ مقصد کے حصول کے لئے مختلف کاروباری پلیٹ فارموں کو جوڑنے کی ضرورت کو اجاگر کیا۔ ہائی کمشنر نے مزید کہا کہ کاروباری برادری کے ساتھ اس طرح کے روابط دونوں ملکوں کے درمیان دوطرفہ تجارت کا حجم بڑھانے میں اہم کردار ادا کریں گے۔ملاقات میں پاکستان ہائی کمیشن کے منسٹر پولیٹیکل زاہد حفیظ چوہدری بھی موجود تھے۔