مقبول خبریں
برطانوی پارلیمنٹ میں3گھنٹے کی بحث ڈیوڈ نٹال کا سیاسی کارنامہ ہے: تحریک حق خود ارادیت یورپ
پاکستانی نژاد برطانوی باکسر عامرخان کی مخرب الاخلاق ویڈیو انٹرنیٹ پر وائرل
19جنوری برطانوی پارلیمنٹ میں مسئلہ کشمیر پر بحث برٹش کشمیریوں کا تاریخی کارنامہ :راجہ نجابت
سی پیک منصوبے میں شامل ہونا برطانیہ کے لیے باعث خوشی ہوگا:برطانوی ہائی کمشنر تھامس ڈریو
سی پیک منصوبہ ملکی ترقی کا ضامن ہے ، سردار مسعود خان کا بلوچستان کے تاجروں سے خطاب
سیدحسین شہیدسرور کا ڈی آئی جی موٹرویزاسلام آباد راجہ شہریارسکندرکے اعزازمیں ظہرانہ
چوہدری پرویز کاوزیر حکومت آزاد کشمیر چوہدری محمد سعید کے اعزاز میں استقبالیہ
پینڈل فرینڈز لیگ اور بلڈنگ بریجزکے ز یر اہتمام پناہ گزینوں کے اعزاز میں ظہرانہ
بریڈ فورڈ کی ڈائری
پکچرگیلری
Advertisement
حضرت محمدؐنے عدل و انصاف،تحمل مزاجی،برداشت،صبر و شکر کا درس دیا : مفتی عبدالرحیم
اولڈہم:رب کریم نے تمام کائنات کا مالک بنا کر حضرت محمدؐ کو اس دنیا میں بھیج کر انسانیت پر احسان عظیم کیا کیونکہ ان کی ولادت با سعادت سے پہلے عورتوں کی عزت کو خاک میں ملانا،زندہ لڑکیوں کو درگور کرنا عام تھا،آپؐ نے عدل و انصاف،تحمل مزاجی،برداشت،صبر و شکر کا درس دیا اور انسان کی خدمت کرنے کا درس دیا،رب کریم نے قلب مصطفیٰ پر قرآن پاک نازل فرما دیا،یعنی حضور پاکؐ اس جہاں میں پہلے آئے پھر قرآن مجید بھیج کر دین اسلام اور ختم نبوت کو تا قیامت جاوداں کر دیا،جب انسان کا سینہ کھل جائے تو پھر سب جہاں کو نور سے روشن کر دیا کیونکہ میلاد مصطفیٰؐ ہونے والا ہے،رب کریم نے محمدؐ کی شکل میں ایک ایسا چاند دنیا میں بھیجا جو خود تو چمکا ہی اور چمک رہا ہے،دنیا کو بھی چمکا رہا ہے،جب نور محمدیؐ آیا تو اس کے آگے تمام انبیائے کرام کے انوار ماند پڑ گئے،سب سے پہلی محفل میلاد میدان عرفات میں ہوئی اس لئے وقوع عرفات ہے،حضرت عبدالمطلب ساری رات خانہ کعبہ کا طواف کر رہے تھے انہیں آواز آئی کے حضرت محمد تشریف لانے والے ہیں اور انکے اس دنیا میں آنے کے بعد خانہ کعبہ کے اندر بت پرستی اور رکھے گئے بت خود بخود پاش پاش ہو جائیں گے اور لوگ ایک خدا کی واحدانیت پر ایمان لائیں گے اور اسی کی پرستش کریں گے پھر ایسے ہی ہوا،ان تاریخی روح پرورکلمات کو مفتی عبدالرحیم نے نگینہ جامع مسجد اولڈہم میں حضور پاکؐ کی ولادت با سعادت کی شب رکھی گئی ایک ایمان افروز محفل کے موقع پر حاضرین کے ایمان کو تازہ کرتے ہوئے کیا،انہوں نے مزید کہا کہ حضور پاکؐ کی زندگی عالم اسلام بلکہ پوری انسانیت کے لئے مشعل راہ ہے اگر ہم انکے بتائے ہوئے قول و فعل،افکار اور راستے پر چلیں تو اسلام ایک مرتبہ پھر دنیا میں غالب ہو سکتا ہے جشن عید میلاد النبیؐ کو منا کر پھر اس پر عمل کرنا چاہئے،ہر چیز کا دار و مدار عمل کے گرد گھومتا ہے،صاحبزادہ علی شان قادری نے کہا کہ ہمارے لئے رب کریم کی طرف سے نور آیا اور بیان کرنے کیلئے کتاب مبین’’قرآن مجید‘‘نازل کی،مسجدہذا کے پیش رو امام حضرت علامہ قاری خادم حسین چشتی نے قرارداد پیش کرتے ہوئے کہا کہ کیونکہ ہم اپنے پیارے نبیؐ کی ولادت منا رہے ہیں اور انہوں نے امن پسندی،صلح جوئی کا درس دیا ہے،ہم اقوام متحدہ سے مطالبہ کرتے ہیں کہ وہ بھارت کی جانب سے مقبوضہ کشمیر کے اندر مردوں،عورتوں اور معصوم بچوں پر ڈھائے جانے والے انسانیت سوز مظالم کو بند کروائے وگرنہ کشمیری زور بازو سے بھارت سے آہنی ہاتھوں نمٹنے سے بھی گریز نہیں کریں،ہم تمام عالم اسلام کے سربراہان سے مطالبہ کرتے ہیں کہ وہ اسلامی اقوام متحدہ کا قیام عمل میں لائیں جس سے انکی آواز کو سنا اور اس پر عمل کیا جائے اس پر حاضرین محفل نے ہاتھ اٹھا کر یک زبان لبیک کہا،تلاوت کلام پاک کا شرف یمن کے بین الاقوامی شہرت یافتہ شیخ القرا الشیخ یاسر بن عبدالباسط المصری نے حاصل کی اور حاضرین پر سکتہ طاری کر دیا،انہوں نے بھی دہشت گردی کی مذمت کرتے ہوئے حضور پاکؐ کے نقش قدم پر چلنے کی تلقین کی اور مسلمانوں کے اندر اتحاد و اتفاق پر زور دیا،نعت رسول مقبولؐ مقامی نعت خواں حاجی حمید،صوفی محمد حسین طارق اور شہرت یافتہ طارق محمود ہمدانی نے بارگاہ رسالت میں پیش کر کے جشن عید میلاد النبیؐ کی خوشیوں کو دوبالا کیا،مولانا فیصل یعقوب ایڈووکیٹ نے انگریزی میں خطاب کرتے ہوئے علمائے کرام کی مجلس کرنے پر زور دیا نہ کہ انٹر نیٹ سے تاریخی حقائق کو مسخ کی ہوئی معلومات سے استفادہ حاصل کیا جائے،اس کے علاوہ امام عتیق الرحمن قادری،سید اکرام شاہ بخاری مظفر آباد آزاد کشمیر،مولانا علی شان شفیلڈ،صوفی محمد طارق حسین قادری،علامہ محمد عمران برمنگھم،صاحبزادہ نور چشم وقاص احمد چشتی،حافظ محمد عقیل نے بھی خطاب کیا،سادات گھرانے کے چشم و چراغ سید حسنین شاہ قادری جیلانی نے بارگاہ الٰہی میں اجتماعی دعا کروائی اور امت مسلمہ کو درپیش مسائل بارے خصوصی دعا کی،مسجد ہذا کے امام قاری خادم حسین چشتی،چیئرمین حاجی محمد بشیر اور دیگر عہدیداران اور انتظامیہ کمیٹی کے ارکان نے حاضرین محفل اور مہمانان گرامی کا دل کی گہرائیوں سے شکریہ ادا کیا،لنگر کا سلسلہ شام6بجے سے لیکر رات کے پچھلے پہر تک مسلسل جاری رہا۔بیورو رپورٹ:فیاض بشیر