مقبول خبریں
پی پی برطانیہ کے زیر اہتمام محترمہ بے نظیر بھٹو شہید کی64ویں سالگرہ کی تقریب کا انعقاد
تحقیقاتی ٹیم ایک طرف، قوم دوسری طرف جا رہی ہے، احتساب نہیں تماشہ ہو رہا ہے:نواز شریف
چمپئنز ٹرافی کے پاک بھارت میچ میں کشمیری کمیونٹی نے سٹیڈیم کے باہرشدید احتجاج کیا
این ڈی ایس، را دہشتگردوں کی سرپرست، افغانستان دہشتگردی کا ناسور ختم کرے:آرمی چیف
مودی سرکار کی بربریت، بھارتی فورسز کے ہاتھوں مزید 4 نہتے کشمیری شہید
سید حسین شہید سرور کا ڈاکٹرپیرسیدعلی رضاکے اعزازمیں اپنی رہائشگاہ پر افطارڈنر کا اہتمام
آکسفورڈ کی غیر مسلم کمیونٹی کے راہنمائوں کی بڑی تعداد کا مرکزی جامع مسجد کا دورہ
کشمیر گروپ مقبوضہ کشمیر میں مظالم بند کروانے کیلئے موثر اقدامات کرے گا:ڈیبی ابراہم
آؤ ہوش کے ناخن لیں!
پکچرگیلری
Advertisement
صدرآزاد کشمیر سردار مسعود کے اعزاز میں سابق میئر کونسلر راجہ وحید کی طرف سےتقریب کا انعقاد
لوٹن : آزاد کشمیر کے صدر سردار مسعود احمد خان کے اعزاز میں لندن کے نواحی علاقے لوٹن میں سابق میئر کونسلر راجہ وحید اکبر نے پرتکلف تقریب کا اہتمام کیا۔ لوٹن کونسل چیمبر میں منعقد ہونے والی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے صدر آزاد کشمیر مسعود احمد خان نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں جاری بھارتی مظالم کسی سے ڈھکے چھپے نہیں۔ برطانوی حکومت کو بھارت سے اس معاملے ہر بات کرنا چاہیے کیونکہ بھارت نے پاکستان کے ساتھ ساتھ برطانیہ سے کئے جانے والے معاہدوں کی خلاف ورزی کا مرتکب ہو رہا ہے۔ صدر آزاد کشمیر سردار مسعود احمد خان نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں تاریخ کی بدترین دہشت گردی کے ذریعے بےگناہ کشمیری عوام کا قتل عام جاری ہے عالمی امن کے اداروں کو فی الفور اس کا نوٹس لینا چاہیے کشمیری رہنما مولانا عبدالرشید ترابی نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ دنیا کے ہر ملک میں موجود کشمیری اور ان کی تنظیمیں اب ایک پلیٹ فارم پر اکٹھا ہو رہی ہیں اور اب بھارت کا کشمیر پر ناجائز قبضہ زیادہ دیر تک نہیں رہے گا۔ تقریب میں لارڈ قربان حسین، مئیر آف ہائی ویکمب کونسلر راجہ ضیاء احمد، چیرمین ویکمب ڈسٹرکٹ کونسلر محبوب حسین بھٹی، مئیر آف آکسفورڈ کونسلر الطاف خان، راجہ ظفر اقبال، قاصی عبد العزیز چشتی، سابق میئر بلیک برن سالیس کیانی، راجہ شکیل اور لوٹن کے دیگر کونسلرز سیاسی و سماجی شخصیات نے بھی شرکت کی۔ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے مقررین کا کہنا تھا کہ صرف اور صرف جموں و کشمیر کے رہائشیوں کو یہ حق حاصل ہے کہ وہ فیصلہ کریں کہ انھیں بھارت یا پاکستان کے ساتھ رہنا ہے یا انھیں ایک مکمل خود مختار ریاست چاہئے۔ تقریب میں کشمیری برادری سے اظہار یک جہتی کے لئے لوٹن کے علاقے سے منتخب ہونے والے انگریز کونسلرز نے بھی شرکت کی۔