مقبول خبریں
برادری ازم پر یقین رکھتے ہیں اور نہ علاقائی تعصب پر اہلیت کی بنیاد پر ڈاکٹر شاہد کی حمائت کر رہے ہیں
اسلام میں جسطرح خدمت انسانی کی حوصلہ افزائی کی گئی اسکی مثال نہیں ملتی: الصف چیریٹی کی امدادی تقریب
لالچی اور خودغرض ٹور آپریٹرز ں نے اللہ کے مہمانوں سے لوٹ کھسوٹ کا بازار گرم کر رکھا ہے
احتجاج کرنیوالے وزیر اعظم ہائوس آ کر مذاکرات کریں، نواز شریف
کشمیریوں نے بھارت کو بتا دیا وہ جدو جہد آزادی سے پیچھے نہیں ہٹیں گے،علی گیلانی
شیراز خان کی برطانیہ واپسی پر چیئرمین سلطان باہو پیر نیازالحسن سروری قادری کی والدہ کی وفات پر تعزیت
کشمیری اس امر پر متفق ہیں کہ ووٹ انہی کو دیا جائے گا جوحق خود ارادیت کی حمائت کرتے ہیں:کونسلر محبوب بھٹی
برطانیہ میں مقیم کمیونٹی پاکستان سے بے پناہ محبت کرتی ہے، . لارڈ میئر بریڈفورڈکا چھچھ ایسوسی ایشن تقریب سے خطاب
حکومت پنجاب کا اوورسیز کمشنر آفس
پکچرگیلری
Advertisement
اسلام آباد تا مظفرآباد ٹرین سروس اور لاہور تا کراچی موٹر وے کا آغاز جلد ہوجائے گا: میاں نواز شریف
لندن ... جلاوطنی میں یہاں گزارا ہوا وقت آج بھی یاد آتا ہے لندن کی ڈیوک اسٹریٹ میں واقع دفتر جہاں آپ سب ساتھیوں سے اکثر ملاقاتیں رہتی زندگی کے یادگار لمحات ہیں جن کی بدولت آج ہمیں ایک بار بھر وطن عزیز کی خدمت کے مواقع میسر آئے۔ امجد ملک اور زبیر گل جیسے مخلص ساتھیوں کے ہمراہ آپ لوگوں کی جمہوریت کیلئے جدوجہد مثالی ہے اسی جدوجہد کے ثمرات ہیں کہ آج پاکستان ترقی کی شاہراہ پر پھر سے گامزن ہے۔ ان خیالات کا اظہار وزیر اعظم پاکستان میاں محمد نواز شریف نے اپنے پہلے سرکاری دورہ برطانیہ میں مسلم لیگی کارکنان، کمیونٹی کے اہم ارکان اور میڈیا کے اعزاز میں منعقدہ ایک تقریب سے خطاب میں کیا۔ اس موقع پر وزیر اعلی پنجاب میاں محمد شہباز شریف، وزیر اعلی بلوچستان ڈاکٹر محمد مالک، وزیر خزانہ اسحاق ڈار، مسلم لیگ ن برطانیہ کے صدر زبیر گل، مشیر داخلہ ڈاکٹر فاطمی اور وزیر اعلی کے دیرینہ دوست سعید شیخ بھی ہمراہ تھے۔ تقریب کی نظامت کے فرائض برطانیہ میں پارٹی کے لائرز ونگ کے صدر بیرسٹر امجد ملک نے ادا کئے۔ وزیر اعظم نے اپنے خطاب میں مزید کہا کہ انہیں کہ انہوں نے گزشتہ پانچ سال کے دوران سابق حکومت کے خلاف کوئی ایسا اقدام نہیں کیا جس پر انہیں شرمندگی ہو، اس وقت حکومت کے ساتھ اختلافات کے باوجود انہوں نے کوئی ایسا قدم نہیں اٹھایا جس کی وجہ سے جمہوریت کو نقصان پہنچے۔ انہوں نے کہا کہ سابق حکومت نے عزت اور وقار کے ساتھ موجودہ حکومت کو اقتدار دیا۔ اس طرح سابق صدر نے موجودہ صدر کو پورے احترام کے ساتھ ان کا حق دیا۔انہوں نے کہا کہ ہم سیاست میں اسی طرح کے افراد چاہتے ہیں ، وزیراعظم نوازشریف نے وزیر خزانہ اسحٰق ڈار کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ وہ ڈالر کو روپے کے مقابلے میں اس کے اصل مقام پر لے آئے ہیں، آج ڈالر 98روپے کا ہوگیا ہے، انہوں نے کہا کہ روپے کے مقابلے میں ڈالر اس برے طریقے سے گررہا تھا کہ ہم نے ڈالر کو بچانے کی کوشش کی، انہوں نے کہا کہ ڈالر اس سے بھی زیادہ نیچے آسکتا تھا مگر ہم نے اس کو اس لئے اس سطح پر روکا کیونکہ اس سے پاکستانی ایکسپورٹرز کو نقصان ہوسکتا تھا جن کے بیرونی ممالک کے ساتھ پہلے سے معاہدے ہو چکے ہیں۔ وزیراعظم نے کہا کہ ان کی حکومت نے پاکستان کو اندھیروں سے نکالنے کا عزم کررکھا ہے اور پاکستان ان کی حکومت کے دور میں ہی توانائی میں خود کفیل ہوجائے گا۔ اس سلسلے میں انہوں نے چین کی جانب سے توانائی کے شعبے میں کی جانے والی 32ارب ڈالر کی سرمایہ کاری کا ذکر کیا اور کہا کہ یہ پاکستان پر قرض نہیں ہوگا بلکہ چینی اور پاکستانی سرمایہ کار مل کر توانائی کے منصوبوں پر عمل کریں گے۔وزیراعظم نے اعلان کیا کہ ریلویز کو جدید خطوط پر استوار کیاجارہا ہے اور پاکستانی ٹرینوں کی رفتار کو 80 میل سے بڑھا کر 120 میل فی گھنٹہ کیا جا رہا ہے۔ انہوں نے یہ اعلان بھی کیا کہ مظفر آباد تک براستہ مری جدید ترین ٹرین چلائی جائے گی اور آزاد کشمیر کو ریلوے لنک سے ملا دیا جائے گا۔ انہوں نے بھارت اور افغانستان کے ساتھ اچھے تعلقات کی بھی خواہش کا اظہار کیا۔ انہوں نے کہا کہ افغانستان میں آنے والی نئی حکومت کے ساتھ بات چیت کی جائے گی۔ ان کا کہنا تھا کہ وہ بھارت کے ساتھ پرامن تعلقات چاہتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ خطے نے امن نہ ہونے کی بھاری قیمت ادا کی ہے۔ اب بھارت کے ساتھ معاملات آگے بڑھنے چاہئیں۔ وزیر اعلیٰ پنجاب میاں شہباز شریف نے کہا کہ موجودہ حکومت کے خلاف 11 ماہ میں کرپشن کا ایک سکینڈل بھی سامنے نہیں آیا۔ انہوں نے کہا کہ دوست ممالک پاکستان کو مشکلات سے نکالنا چاہتے تھے مگر انہوں نے سابق دور میں اپنی مٹھی بند رکھی۔ انہوں نے کہا کہ سابق صدر زرداری نے کہا تھا کہ وہ ایک سو بلین ڈالر کی سرمایہ کاری لائیں گے مگر ان کے دور میں ملکی خزانہ خالی ہوگیا۔ انہوں نے کہا کہ اوورسیز پاکستانیوں کے لئے بنایا گیا کمیشن کھائو مال نہیں ہوگا بلکہ لوگوں کی مدد کرے گا۔ انہوں نے کہاکہ زبیر گل نے پارٹی کے لئے قربانیاں دی ہیں اور ان قربانیوں کی قدر کرتے ہیں۔ مسلم لیگ ن برطانیہ کے صدر زبیر گل نے کہا کہ وزیر اعظم نواز شریف نے اپنے مشکل وقت کے ساتھیوں کو ہمیشہ یاد رکھا ہے اور ان کی یہاں موجودگی اس بات کا ثبوت ہے۔ انہوں نے کہا کہ برٹش پاکستانی نواز شریف کو تیسری مرتبہ اس مقام پر دیکھنا چاہتے تھے اور ان کا یہ خواب پورا ہوا ہے۔ انہوں نے کہا کہ وزیراعلیٰ پنجاب میاں شہباز شریف نے اوورسیز پاکستانیوں کے لئے وزیر اعظم کی ہدایت پر ایک بااختیار کمیشن بنایا ہے جس سے توقع ہے کہ اوور سیز پاکستانیوں کے مسائل حل ہوں گے۔ بیرسٹر امجد ملک نے وزیر اعظم کے سامنے اوورسیز پاکستانیوں کے مسائل کو رکھا اور کہا کہ لاہور ایئرپورٹ اتنا چھوٹا ہے کہ دو پروازیں ایک ساتھ آجائیں تو ایئرپورٹ مچھلی بازار بن جاتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ایئرپورٹس پر اوورسیز پاکستانیوں کے لئے کائونٹرز نہ ہوئے کے برابر ہیں۔ سابق حکومت کی جانب سے کالنگ کارڈز پرٹیکس لگائے جانے کی وجہ سے پاکستان میں کال کرنا بہت زیادہ مہنگا ہوگیا ہے۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ اوورسیز پاکستانیوں کے لئے کارڈز کو سستا کیا جائے۔ انہوں نے کہا کہ دہری شہریت کا قانون میں ابہام کو بھی فوری طور پر دور کیا جائے۔ اس تقریب کی خاص بات تمام مقررین اور حاضرین کا خوشگوار موڈ تھا۔ دوران تقریب ماحول انتہائی خوشگوار رہا اور بعض مسلم لیگی بے اختیار نعرے بازی بھی کرتے رہے۔ وزیر اعلی پنجاب دوران تقریر اپنے روائیتی جوش میں آتے آتے رہے۔ تقریب میں سیکیورٹی پر حکومت پاکستان اور برطانیہ کے کمانڈوز تمام وقت جوکس رہے تاہم پارٹی کیطرف سے ناصر بٹ اور اعجاز گل بھی اس سلسلے میں پوری طرح مستعد رہے جس بنا پر کسی قسم کا کوئی نا خوشگوار واقع پیش نہ آیا اور تمام مقررین اپنئ دل کی باتیں کھل کر کر پائے۔