مقبول خبریں
برادری ازم پر یقین رکھتے ہیں اور نہ علاقائی تعصب پر اہلیت کی بنیاد پر ڈاکٹر شاہد کی حمائت کر رہے ہیں
اسلام میں جسطرح خدمت انسانی کی حوصلہ افزائی کی گئی اسکی مثال نہیں ملتی: الصف چیریٹی کی امدادی تقریب
لالچی اور خودغرض ٹور آپریٹرز ں نے اللہ کے مہمانوں سے لوٹ کھسوٹ کا بازار گرم کر رکھا ہے
احتجاج کرنیوالے وزیر اعظم ہائوس آ کر مذاکرات کریں، نواز شریف
کشمیریوں نے بھارت کو بتا دیا وہ جدو جہد آزادی سے پیچھے نہیں ہٹیں گے،علی گیلانی
شیراز خان کی برطانیہ واپسی پر چیئرمین سلطان باہو پیر نیازالحسن سروری قادری کی والدہ کی وفات پر تعزیت
کشمیری اس امر پر متفق ہیں کہ ووٹ انہی کو دیا جائے گا جوحق خود ارادیت کی حمائت کرتے ہیں:کونسلر محبوب بھٹی
برطانیہ میں مقیم کمیونٹی پاکستان سے بے پناہ محبت کرتی ہے، . لارڈ میئر بریڈفورڈکا چھچھ ایسوسی ایشن تقریب سے خطاب
حکومت پنجاب کا اوورسیز کمشنر آفس
پکچرگیلری
Advertisement
وزیرا عظم نواز شریف نے سول سکیورٹی اداروں میں بھرتیوں پر عائد پابندی ختم کردی
کراچی ...وزیرا عظم نواز شریف نے کراچی سمیت ملک بھر میں سول سکیورٹی اداروں میں بھرتیوں پر عائد پابندی ختم کردی ہے اور ہدایت کی ہے کہ پولیس میں بھرتیوں کے عمل کے لیے پاک فوج کے بھرتی کے مراکز کی خدمات حاصل کی جائیں ،کراچی آپریشن پر کسی دبائو میں نہیں آئیں گے ۔ انہوں نے کہا کہ بہت لاشیں گر چکی ہیں، کراچی آپریشن پر بلیک میل نہیں ہوں گے ، انہوں نے ان خیالات کا اظہار گورنر ہاؤ س کراچی میں امن و امان کے حوالے سے اجلاس کی صدارت اور پی اے ایف میوزیم میں کراچی ایکسپورٹ ٹرافی ایوارڈ کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔اجلاس میں طے کیا گیا کہ آپریشن میں گرفتار ہونے والے ملزمان کی سیاسی سرپرستی کرنے والے عناصر کو بھی کٹہرے میں لایاجائے گا ۔ لیاری میں امن وامان کے لیے 2ہزار سابق فوجیوں کو بھرتی کر کے ٹاسک فورس کے قیام کا بھی فیصلہ کیا گیا،وزیراعظم نے ڈی جی رینجرز کی سفارش پر پولیس کی بھرتیاں آرمی سلیکشن سنٹر کے ذریعے کرنے کی ہدایت بھی کی ۔اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ پولیس میں کوئیک رسپانس فورس فوری تشکیل دی جائے گی اور ان کی ٹریننگ آرمی کمانڈوز کی طرز پر کرنے کے ساتھ ان کو جدید وسائل اور اسلحہ فراہم کیا جائے گا ۔ وزیر اعظم نے پراسیکیوٹرز ،گواہوں ،تفتیش کاروں اور ججوں کی حفاظت کے لیے انسداد دہشت گردی کی عدالتوں کو ملیر چھاؤنی منتقل کرنے کی بھی ہدایت کی ۔ انہوں نے کہا کہ وزارت داخلہ سندھ حکومت کے ساتھ مل کر دہشت گردوں کی دوسرے صوبوں کی جیلوں میں منتقلی کے لیے پالیسی مرتب کرے ۔وزیر اعظم نے ہدایت کی کہ سندھ میں دہشت گردوں کے لیے فول پروف سکیورٹی اقدامات پر مشتمل جیلوں کی تعمیر فوری مکمل کی جائے ۔وزیر اعظم نے واضح کیا کہ کراچی آپریشن مکمل جرائم کے خاتمے تک جاری رکھا جائے گا ۔وزیرا عظم نے ہدایت کی کہ فوری طور پر غیر قانونی سموں کو بند کیا جائے اور نئی سموں کے اجراء کے لیے بائیو میٹرک سسٹم پر عمل درآمد کو یقینی بنایا جائے ۔وزیر اعظم نے حکومت سندھ کو ہدایت کی کہ لیاری میں صورت حال کو کنٹرول کرنے کے لیے مزید تھانے قائم کیے جائیں ، جو دہشت گرد مفرورہیں ان کے سروں کی قیمتیں فوری مقرر کی جائیں ۔ اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ بیرون ملک فرار ہونے والے دہشت گردوں کی گرفتاری کے لیے وفاقی وزارت داخلہ سندھ حکومت سے مشاورت کے بعد انٹرپول سے رجوع کرے گی ۔