مقبول خبریں
اکیڈمی آف سائنس،ٹیکنالوجی اینڈ مینجمنٹ اولڈہم کی سالانہ تقسیم اسناد تقریب کا انعقاد
کشمیر یوم سیاہ کے حوالے سے پاکستان ہائی کمیشن لندن میں سیمینار، بھارتی مظالم کی پرزور مذمت
دعوت اسلامی برمنگھم کے زیر اہتمام خراب موسم کے باوجودجشن عید میلاد النبیؐ کا جلوس
برطانوی شاہی جوڑے کی پاکستان میں زبردست پذیرائی، وزیر اعظم اور صدر مملکت سے ملاقاتیں
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
میلاد النبی کی تقریبات منعقد کر کے اللہ کریم کے شکر گزار ہیں کہ اس نے مومنوں پر احسان فرمایا
پارک ویو کمیونٹی سنٹر شہیر واٹر میں ہمنوا یو کے کے زیرِ اہتمام یوم آزادی پاکستان تقریب کا انعقاد
یاسمین ڈار کا لیبر پارٹی لیڈر جیریمی کوربن کے ساتھ مل کر انتخابی مہم کا آغاز
یہ رنگ جو مہکے تو ہوا پھول بنے گی!!!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
سوشل میڈیا پر دارالامان میں ہونیوالی بدسلوکی کی ویڈیو کی تحقیقات کرائی جائیں
مانچسٹر(محمدفیاض بشیر) معروف سماجی رہنما خالد چوہدری نے کہا ہے کہ آقائے دوجہاں کا فرمان ہے کہ مسلمانوں کے گھروں میں سب سے بہترین گھر وہ ھے جس میں یتیم ھو اور اس کیساتھ اچھا برتاؤ کیا جاتا ہو- اور مسلمانوں کے گھروں میں سب سے برا گھر وہ ہے جس میں یتیم ہو اور اس کیساتھ بد سلوکی کی جاتی ہے، مگر صد افسوس کا مقام ہے کہ پاکستان میں داررالامان کی لیڈی سپرینٹنڈنٹ کی سوشل میڈیا پر ویڈیو میں حکومتی بے لگام وزیروں سے یتیم بچیوں کی عزت بچانے کے لیے چیخ وپکار کا کسی پر بھی اثر نہیں ہوا۔انکا کہنا تھا سوشل میڈیا پر ویڈیو وائرل ہوئے دو ہفتے گزر گئے لیکن کسی الیکٹرونک میڈیا چینلز اور پرنٹ میڈیا نے یہ خبر کیوں نہیں دی؟ اعلی پولیس آفیسرز،حکومتی عہدیداروں،وزارت سماجی امور ، وزارت مذہبی امور،وزیر اعلیٰ،وزیر اعظم، چیف جسٹس آف ھائی کورٹ و چیف جسٹس آف سپریم کورٹ نے کوئی از خود نوٹس ابھی تک کیوں نہیں لیا؟وہ کون سے حکومتی وزراء اور اعلی سرکاری افسران ہیں؟ جو یتیم و لاوارث بچیوں کے سر پر شفقت کا ہاتھ رکھنے کی بجائے ان کی عزتوں سے کھیل رہے ہیں-میں بطور ایک مسلمان اسلامی جمہوریہ پاکستان کے وزیراعظم،وزیر اعلیٰ،وزیر مذہبی امور،وزیر سماجی امور،پولیس افسران،چیف جسٹس آف ھائی کورٹ و سپریم کورٹ اور چیف آف آرمی سٹاف سے مطالبہ کرتا ھوں کہ فی الفور اس ویڈیو کے تناظر میں از خود نوٹس لیکر اس لیڈی سپریڈنٹ و تمام انتظامیہ دارالامان کو طلب کرکے اس معاملے کی تحقیقات کرائی جائیں۔وہ کون سے وزراء اور دیگر سرکاری افسران ہیں؟ جو دارالامان سے یتیم بچیوں کی عزتوں سے کھیل رہے ھیں۔اگر اس معاملے کو نظر انداز کیا گیا تو یاد رکھیں روز قیامت سب سے پہلے آپ سے ان یتیم بچیوں کے جان و مال،عزت،تعلیم و تربیت،حقوق کے بارے میں سوال کیا جائیگا۔کہ اللہ نے آپ کو عہدے و طاقت اور عزت سے نوازا- لیکن آپ نے اللہ کا شکر تک ادا نہیں کیا اور نہ ہی اللہ کی ان یتیموں و مساکین لاوارث بندیوں کی عزتوں کیساتھ کھیلنے والے درندوں و بے لگام گھوڑوں کو بے نقاب کرکے کوئی سزا دی۔اس سے پہلے کہ ان یتیم بچیوں کی آہوں و بد دعاؤں سے کوئی اور عذاب الٰہی نازل ھو اور آپکے پاس کوئی عہدہ و طاقت باقی نہ رہے۔میں امید کرتا ھوں کہ اپ یتیم بچیوں کی آہوں اور سسکیوں سے پہلے ہی ان درندوں کو گرفتار کرکے یتیم بچیوں کی داد رسی کریں گئے -پاکستان پریس کلب یوکے،فرینڈز آف پاکستان پریس کلب یو کے و دیگر پریس کلبز اس واقع کی جلد از جلد تحقیقات کروانے کا پر زور مطالبہ کرتے ہیں اور ان درندوں و بے لگام گھوڑوں کو گرفتارکر کےسر عام پھانسی دی جائے تاکہ رہتی دنیا تک کوئی یتیم بچیوں کی طرف بری نظر سے نہ دیکھے۔یہ اب آپکی زمہ داری ھے۔پاکستان پریس کلب یوکے و فرینڈز آف پاکستان پریس کلب یوکے کے چیئرمین، صدور و سیکرٹریز اور ممبران ایسے واقعات کی پر زور مذمت کرتے ہوئے اسلامی جمہوریہ پاکستان کے وزیراعظم سے مطالبہ کرتےہیں کہ آئیندہ چوبیس گھنٹوں میں قوم کے سامنے حقائق لائے جائیں۔