مقبول خبریں
اکیڈمی آف سائنس،ٹیکنالوجی اینڈ مینجمنٹ اولڈہم کی سالانہ تقسیم اسناد تقریب کا انعقاد
کشمیر یوم سیاہ کے حوالے سے پاکستان ہائی کمیشن لندن میں سیمینار، بھارتی مظالم کی پرزور مذمت
دعوت اسلامی برمنگھم کے زیر اہتمام خراب موسم کے باوجودجشن عید میلاد النبیؐ کا جلوس
برطانوی شاہی جوڑے کی پاکستان میں زبردست پذیرائی، وزیر اعظم اور صدر مملکت سے ملاقاتیں
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
میلاد النبی کی تقریبات منعقد کر کے اللہ کریم کے شکر گزار ہیں کہ اس نے مومنوں پر احسان فرمایا
پارک ویو کمیونٹی سنٹر شہیر واٹر میں ہمنوا یو کے کے زیرِ اہتمام یوم آزادی پاکستان تقریب کا انعقاد
یاسمین ڈار کا لیبر پارٹی لیڈر جیریمی کوربن کے ساتھ مل کر انتخابی مہم کا آغاز
یہ رنگ جو مہکے تو ہوا پھول بنے گی!!!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
برطانیہ میں نئے انتخابات کیلئے انتخابی مہم کا آغاز، کئی سیاستدانوں کا مستقبل مخدوش
لندن(نمائیندہ خصوصی) برطانوی پارلیمنٹ کی تحلیل کے بعد سرکاری طورپر عام انتخابات کیلئے 5 ہفتے کی انتخابی مہم کا آغاز ہوگیا ہے۔ وزیراعظم بورس جانسن نے گزشتہ روز بکنگھم پیلس میں ملکہ سے ملاقات کی، جو اس بات کی علامت ہے کہ 12 دسمبر کو ہونے والے مجوزہ عام انتخابات کیلئے سرکاری طورپر انتخابی مہم کا آغاز ہوگیا ہے۔ کنزرویٹو پارٹی بھی اب اپنی انتخابی مہم وزیراعظم بورس جانسن کے اس وعدے کے ساتھ شروع ہوئی کہ وہ بریگزٹ کرسکتے ہیں جبکہ لیبر پارٹی کے قائد جیرمی کوربن لیبر پارٹی کی زیر قیادت حقیقی تبدیلی کا وعدہ کریں گے۔ گرین پارٹی کلائمٹ ایکشن پر سالانہ 100 بلین پونڈ خرچ کرنے کے وعدے کے ساتھ انتخابی مہم کاآغاز کرے گی جبکہ لبرل ڈیموکریٹس ذہنی صحت سے متعلق سروسز کیلئے سالانہ 2.2 بلین پونڈ خرچ کرنے کے وعدے کے ساتھ انتخابی مہم کا آغاز کریں گے اور یہ رقم انکم ٹیکس میں ایک فیصد اضافے کے ذریعے پورا کرنے کا اشارہ دیں گے۔ لیبر پارٹی کی قیادت نے گزشتہ روز ایک میٹنگ میں کرس ولیم سن اور کیتھ واز کو ٹکٹ دینے یا نہ دینے کے بارے میں غور کیا۔ واضع رہے برطانوی ہائوس آف کامنز نے بھارتی وزیراعظم نریندر مودی کے اہم حمایتی اور لیبر پارٹی کے ایم پی کیتھ واز کو چھ ماہ کیلئے معطل کر دیا تھا۔ ان پر ایجویئر میں ایک فلیٹ میں دو مردانہ جسم فروشوں کیلئے کوکین خریدنے کی رضامندی ظاہر کرنے کا الزام ہے۔ ایم پیز نے کامنز کی سٹینڈرز باڈی کی سفارشات منظور کر لیں، جن میں یہ انکشاف کیا گیا تھا کہ اس بات کے ٹھوس ثبوت موجود ہیں کہ اگست 2016میں لیسٹر ایسٹ سے ایم پی کیتھ واز نے کلاس اے ڈرگ کیلئے ادائیگی کی پیشکش کی تھی اور ان دو مردانہ جسم فروشوں کے ساتھ جنسی عمل کرنے کیلئے رقم دی تھی۔