مقبول خبریں
کونسلر شکیل احمد تیسری بار لیبر پارٹی کی طرف سے مئی 2020ء کے لئے امیدوار نامزد
کشمیر کی حیثیت میں یکطرفہ بھارتی تبدیلی جنوبی ایشیا میں خطرناک بگاڑکا باعث ہوگی
پاک سر زمین پارٹی کے مرکزی جوائنٹ سیکرٹری محمد رضا کی زیر صدارت عہدیداران و کارکنان کا اجلاس
برطانوی شاہی جوڑے کی پاکستان میں زبردست پذیرائی، وزیر اعظم اور صدر مملکت سے ملاقاتیں
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
حلقہ ِ ارباب ِ ذوق کے ادبی پروگرام میں پاکستانیوں اور کشمیری کونسلرز کی بڑی تعداد میں شرکت
پارک ویو کمیونٹی سنٹر شہیر واٹر میں ہمنوا یو کے کے زیرِ اہتمام یوم آزادی پاکستان تقریب کا انعقاد
پروفیٹک گفٹس ویڈنگ اینڈ ایونٹس آرگنائزر کے زیر اہتمام ایشین ویڈنگ اینڈ پلانرز ایونٹ کا انعقاد
میرے تمام خواب نظاروں سے جل گئے
پکچرگیلری
Advertisement
لیبر پارٹی کی سالانہ کانفرنس میں مسئلہ کشمیر پر قرارداد متفقہ طور پر منظور کر لی گئی
براٹن (محمد فیاض بشیر) لیبر پارٹی کی سالانہ کانفرنس میں مسئلہ کشمیر پر قرارداد متفقہ طور پر منظور، کشمیر دوست لیبر رہنماؤں ممبران پارلیمنٹ کی خصوصی کاوش سے قرارداد کانفرنس کے ایجنڈے میں شامل کی گئی اور دو روزہ بحث کے بعد متفقہ طور پر منظور کر لی گئی، اس سے قبل لیبر پارٹی نے 1995ء میں مسئلہ کشمیر کے حوالے سے پالیسی اسٹیٹمنٹ جاری کی تھی۔ قرار داد میں مطالبہ کیا گیا ہے کہ کشمیر میں جاری کرفیو، لاک ڈاؤن کو فوری ختم اور انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کی روک تھام کی جائے۔ آزادی اظہاررائے پر پابندی کو ختم اور نظر بند و گرفتار سیاسی قیادت کو رہا کیا جائے۔ کشمیر میں شہریوں کو گرفتار و غائب کرنا، خواتین کے ساتھ ناروا سلوک سمیت ہر طرح کی انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کو بند ہونا چاہئے۔ لیبر پارٹی انسانی آزادی، آزادی اظہار رائے اور انسانی حقوق پر یقین رکھتی ہے۔ ریاستی طاقت کے ذریعے انسانی حقوق کی پامالی اور آزادی اظہار پر قدغن قابل مذمت ہے۔قرارداد میں کہا گیا کہ کشمیر ایک متنازعہ علاقہ ہے اور کشمیریوں کو اپنی آزادی اور اپنی سرزمین پر قبضے کے خلاف جدو جہد کا پورا حق ہے۔اقوام متحدہ اور دیگر اداروں کو کشمیر میں انٹر نیشنل فیکٹ فائنڈنگ مشن بھیج کر حالات کا جائزہ لینا چاہیئے۔ قرارداد میں ہندوستان اور پاکستان کی حکومتوں سے مطالبہ کیا گیا کہ لائن آف کنٹرول پر سویلین آبادی پر گولہ باری اور جارحیت کو روکا جائے۔ قرار داد میں لیبر پارٹی لیڈر ایم پی جیریمی کوربن سے درخواست کی گئی کہ وہ اقوام متحدہ کی انسانی حقوق کونسل میں شریک ہو کر اس مسئلہ کے لئے اپنی آواز بلند کریں۔ پاکستان اور بھارتی ہائی کمشنر ز سے ملاقات کر کے انہیں کانفرنس کے شرکاء کی سفارشات پہنچائی جائیں۔ لیبر پارٹی کی سالانہ کانفرنس میں یہ قرار دادلیبر پارٹی میں نیشنل ایگزیکٹو کی کشمیری نژاد ارکان کونسلر یاسمین ڈار، ایم پی شبانہ محمود، سابق ممبر نیشنل ایگزیکٹو کمیٹی محمد اعظم، ممبر یورپی پارلیمنٹ ایم ای پی رچرڈ کوربٹ کے علاوہ لیبر پارٹی رہنماؤں ریچل گرنہم، کلاڈیا ویب، این ہینڈرسن نے خصوصی معاونت کی۔ جموں و کشمیر تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے چیئرمین راجہ نجابت حسین اور ان کی ٹیم نے کانفرنس کے تین دن مسلسل لابی کی اورلیبر پارٹی رہنماؤں کی مشاورت اور کوششوں سے کشمیر قرار داد کو آخری وقت میں کانفرنس کے ایجنڈے میں شامل کروایا۔ اس موقع پر پاکستانی ہائی کمشنر نفیس زکریا بھی کانفرنس میں موجود تھے۔ تحریک حق خود ارادیت کے چیئرمین راجہ نجابت حسین نے ان تمام ممبران پارلیمنٹ، مندوبین کا شکریہ ادا کیا جنہوں نے لابی مہم میں بڑھ چڑھ کر حصہ لیا اور مظلوم کشمیریوں کا کیس ایک بار پھر لیبر پارٹی کے پلیٹ فارم پر اجاگر کیا۔ راجہ نجابت حسین نے کہا کہ ہماری جدو جہد کا مقصدریاست جموں و کشمیر کے عوام کو حق خود ارادیت دلوانا ہے اور ہم اس مقصد کے حصول کے لئے ہر سطح پر آواز بلند کریں گے اور ہر فورم کا دروازہ کھٹکھٹائیں گے۔ اگلے ہفتے برطانیہ کی حکمران جماعت کنزرویٹو پارٹی کی سالانہ کانفرنس میں بھرپور لابنگ کی جائے گی اور کشمیر دوست ارکان پارلیمنٹ اور کنزرویٹو رہنماؤں کے ساتھ مل کر پارٹی کے اندر کشمیریوں کا نکتہ نظر پہنچائیں گے وہیں کانفرنس کے باہر ٹریڈ یونینز، برٹش کشمیری و پاکستانی تنظیموں کے ساتھ مل کر 29ستمبر کو مانچسٹر میں مظاہرہ بھی کریں گے۔ اس موقع پر پاکستانی ہائی کمشنر نفیس زکریا، راجہ نجابت حسین، ممبران پارلیمنٹ ایم پی افضل خان، ایم پی یاسمین قریشی، ایم پی خالد محمود نے لیبر پارٹی میں کشمیر قرارداد منظور کرانے پر کونسلر یاسمین ڈار، عظمی رسول، کونسلر نگہت خان، ایم پی ناز شاہ، کونسلرکنیز اختر، کونسلر نسیم بیگم، کونسلر احمد بوستان، کونسلر صبیحہ خان، کونسلر نویدہ خان، ذیشان عارف، آصف مقصود کو شاندار الفاظ میں خراج تحسین پیش کیا۔ انہوں نے کہا کہ 1995ء کی پالیسی اسٹیٹمنٹ کے بعد آج یہ قرارداد برٹش کشمیریوں کی سفارتی سطح پر بڑی کامیابی ہے۔ اس سے مستقبل مں مثبت نتائج برآمدہوں گے۔ اس موقع پر کل جماعتی کشمیر رابطہ کمیٹی کے صدر چوہدری محمد عظیم، سرپرست حافظ فضل احمد قادری، سیکرٹری راجہ امجد خان، مسلم لیگ ن برطانیہ کے چیئرمین راجہ آفتاب شریف، صدر مسلم لیگ ن زبیر اقبال کیانی، خواتین رہنماؤں صبیحہ شہزاد، آسیہ حسین، سمیرا فرخ، ثمینہ خان، بریڈ فورڈ کے سابق لارڈ مئیر راجہ غضنفر خالق، ناٹنگھم کے لارڈ مئیر کونسلر گلنواز خان، رچڈیل کے سابق مئیر کونسلر محمد زمان، مانچسٹر کے سابق لارڈ مئیر کونسلر نعیم الحسن، برسٹل کی مساجد کونسل کے صدر راجہ محمد عارف، کونسلر شعیب اختر، سابق میئر چودہری ارشد محمود، لیڈز مساجد کونسل کے صدر ارشد محمود کھٹانہ اور دیگر نے لیبر پارٹی کی کانفرنس میں کشمیر قرار داد کی منظوری پر اس کے متحرک کردار وں کو خراج تحسین پیش کیا۔