مقبول خبریں
ڈیبی ابراھم کیساتھ ناروا سلوک سے بھارت کا نام نہاد جمہوری چہرہ بے نقاب
مہنگائی کی ذمے دار عمران خان حکومت ہے ،شہباز شریف
دعوت اسلامی برمنگھم کے زیر اہتمام خراب موسم کے باوجودجشن عید میلاد النبیؐ کا جلوس
برطانوی شاہی جوڑے کی پاکستان میں زبردست پذیرائی، وزیر اعظم اور صدر مملکت سے ملاقاتیں
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
اسرار احمد راجہ کی کتاب کی تقریب رونمائی ،مئیر آف لوٹن کونسلر طاہر ملک ودیگرافراد کی شرکت
پارک ویو کمیونٹی سنٹر شہیر واٹر میں ہمنوا یو کے کے زیرِ اہتمام یوم آزادی پاکستان تقریب کا انعقاد
راجہ نجابت حسین کی ڈیبی ابراھام کے ہندوستان میں داخلے پر پابندی کی شدید مذمت
آتش فشاں
پکچرگیلری
Advertisement
حضرت امام حسین ؓنے نانا حضرت محمدؐکے دین کو تاقیامت امر کر دیا: پیر ابو احمد مقصود مدنی
مانچسٹر (محمد فیاض بشیر)حضرت امام علیہ السلام نے کربلا کے میدان میں یزیدی قوتوں کے آگے جھکنے کی بجائے خاندان ساتھیوں سمیت شہادت کو ترجیح دی۔ حضرت امام حسین علیہ السلام نے نانا حضرت محمد صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کے دین کو تاقیامت امر کر دیا جس سے دین اسلام کا علم آج عالم اقوام میں بلند ہے۔ تاریخی حقائق کو ادارہ نور السلام فیصل آباد کے بانی پیر ابو احمد محمد مقصود مدنی نے بذریعہ میڈیا عالمی سطح تک پہنچایا ۔ ان کا مذید کہنا تھا کہ اسلام امن پسندی،صلح جوئی باہمی محبت و اخوت کا درس دیتا ہے اسکی اعلیٰ ترین مثال واقعہ کربلا ہے ۔ان کا کہنا تھا کہ آج اگر دنیا میں مسلمان آزمائشوں میں گرے ہوئے ہیں تو اسکی بنیادی وجہ قرآن مجید کی تعلیمات اور سنت رسول صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم سے دوری ہے اگر اس پر عمل درآمد کیا جائے تو اسلام کا غلبہ ہو گا۔ان کا کہنا تھا کہ اگر دور حاضر میں یزیدیت کی مثال دیکھی جائے تو مقبوضہ کشمیر نے مودی سرکار نے مسلمان کشمیریوں پر پچھلے چھتیس دن سے کرفیو کا نفاذ کر کے انکے لیے کھانے پینے اور ادویات کی قلت کر کے یزید اور اسکے ساتھیوں کی تاریخ دوہرا دی ہے مودی سرکار دور حاضر کا یزید اور ہٹلر ہے اور حق و سچ کا ساتھ دینے کے لیے عالمی دنیا سرد مہری کا شکار ہے ۔ ان کا کہنا تھا کہ امت مسلمہ کے لیے کربلا کا معرکہ مشعل راہ ہے کہ باطل قوتوں کو شکست دینے کے لیے حق و سچ کا علم بلند کرے۔ ان کا کہنا تھا ہمارے پیارے نبی حضرت محمد صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم نے ہمیں مذہب ذات پات سے بالاتر ہوکر انسانیت کی خدمت کا درس دیا لیکن لمحہ فکریہ ہے کہ مقبوضہ کشمیر میں ظلم و ستم کی چکی میں پسی انسانیت دنیا کو پکار رہی ہے کوئ بھی عملی مدد کے لیے میدان میں نہیں آیا ہے اور جب ایسے حالات ہوں تو پسی ہوئ قوم کندن بن کر ایسے ابھرتی ہے کہ پھر راستے کی تمام رکاوٹیں عبور کر کے اپنی منزل حاصل کر کے ہی دم لیتی ہے۔ میں یہی کہوں گا کیا صرف مسلمان کے پیارے ہیں حسین چرخ نوع بشر کے تارے ہیں حسین انسان کو بیدار تو ہو لینے دو ہر قوم پکارے گی ہمارے ہیں حسین