مقبول خبریں
ڈیبی ابراھم کیساتھ ناروا سلوک سے بھارت کا نام نہاد جمہوری چہرہ بے نقاب
مہنگائی کی ذمے دار عمران خان حکومت ہے ،شہباز شریف
دعوت اسلامی برمنگھم کے زیر اہتمام خراب موسم کے باوجودجشن عید میلاد النبیؐ کا جلوس
برطانوی شاہی جوڑے کی پاکستان میں زبردست پذیرائی، وزیر اعظم اور صدر مملکت سے ملاقاتیں
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
اسرار احمد راجہ کی کتاب کی تقریب رونمائی ،مئیر آف لوٹن کونسلر طاہر ملک ودیگرافراد کی شرکت
پارک ویو کمیونٹی سنٹر شہیر واٹر میں ہمنوا یو کے کے زیرِ اہتمام یوم آزادی پاکستان تقریب کا انعقاد
راجہ نجابت حسین کی ڈیبی ابراھام کے ہندوستان میں داخلے پر پابندی کی شدید مذمت
آتش فشاں
پکچرگیلری
Advertisement
جم میکمان کے ساتھ مل کر عالمی سطح پر کشمیری کمیونٹی کی آواز اٹھائیں گے: ڈیبی ابراہم
اولڈہم (محمد فیاض بشیر)مقبوضہ کشمیر میں مودی سرکار کی سفاکانہ کارروائیوں ،انسانی حقوق کی بدترین پامالیوں اور پچھلے چوبیس روز سے جاری کرفیو بارے برطانوی حکومت اور بین الاقوامی طاقتوں کی جانب سے اٹھائے جانے والے اقدامات بارے صوبہ خیبر پختونخواہ محکمہء تعلیم کے نمائندہ خصوصی برائے تعلیم تارکین وطن سید باسط شاہ مشوانی نے ایک میٹنگ کا انعقاد کیا جس میں برطانوی پارلیمنٹ میں آل پارٹیز پارلیمانی گروپ کی چئیر پرسن ڈیبی ابراہم اور رکن پارلیمنٹ جم میکمان کے علاوہ جموں کشمیر تحریک حق خود ارادیت انٹرنیشنل کے چیئرمین راجہ نجابت حسین نے بھی شرکت کی۔ اس موقع پر ڈیبی ابراہم کا کہنا تھا کہ میٹنگ انتہائی مفید رہی اور ہم نے کشمیری قوم کے ساتھ مکمل اظہار یکجہتی کا اظہار کے ساتھ کہ اب اگلا قدم کیا اٹھائیں گے بارے بھی بات چیت ہوئی۔ ان کا مذید کہنا تھا اس بات کا بھی اعادہ کیا ہے کہ ساتھی رکن برطانوی پارلیمنٹ جم میکمان کے ساتھ ملکر برطانوی پارلیمنٹ اور عالمی سطح پر کشمیری کمیونٹی کی آواز اٹھائیں تاکہ انہیں آزادی اور حق خود ارادیت مل سکے۔ رکن برطانوی پارلیمنٹ جم میکمان کا کہنا تھا کہ میرے آفس کو کشمیری کمیونٹی کی جانب سے لاتعداد ای میلز موصول ہوئی ہیں جن میں مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں بارے بیان کیا گیا ہے۔ ان کا مذید کہنا تھا کہ بھارتی حکومت کو انسانی حقوق کی خلاف ورزیاں روکنے کے لیے اقدامات اٹھانے چاہئیں ساتھ میں بین الاقوامی کمیونٹی اور برطانوی حکومت کو بھی اس مسئلہ پر مذید توجہ دینے کی ضرورت ہے ۔ان کا کہنا تھا کہ ہمیں کہا جاتا ہے کہ آپ کشمیر کے مسئلہ پر گہری دلچسپی کیوں لیتے ہو تو بنیادی وجہ کہ اولڈہم میں بسنے والی کشمیری کمیونٹی کا مسئلہ ہے ۔ میزبان سید باسط شاہ مشوانی کا کہنا تھا کہ برطانیہ بھر میں کشمیر کی حالیہ کشیدہ صورتحال بارے کافی سرگرمیاں ہو رہی ہیں اس میٹنگ کا مقصد ہم اس بات کو یقینی بنا رہے ہیں کہ ہم سب کی ایک دوسرے کے ساتھ باہمی ہم آہنگی ہو ان کا مذید کہنا تھا کہ ہمیں برطانیہ کی کمیونٹی کو کشمیر کی کشیدہ صورتحال بارے آگاہی دینا ہے اور اولڈہم کے اراکین برطانوی پارلیمنٹ مسئلہ کشمیر بارے سرگرم ہیں ۔ میٹنگ میں کونسلر شاہد مشتاق، محمد اعظم، محمد ماجد ،فضل رحیم، خاتون کونسلرز نائلہ ابراہیم، عروج شاہ،عمر شریف ، حاجی طارق رفیقِ اور مقبوضہ کشمیر وادی سری نگر کی باشندہ منزہ اندرابی نے بھی شرکت کی اور سری نگر میں اپنے والدین اور عزیز و اقارب کے ساتھ پچھلے چوبیس دنوں سے مسلسل رابطہ کرنے کے باوجود بھی بات چیت نہ ہونے پر سخت تشویش کا اظہار کیا اور برطانیہ اور بین الاقوامی کمیونٹی سے مداخلت کرنے پر زور دیا۔