مقبول خبریں
مقبوضہ کشمیر کےعوام کو بھارتی چنگل سےنجات دلانے کیلئے برطانوی حکومت کردار ادا کرے:راجہ نجابت
ڈیبی ابراھم کی قیادت میں ممبران پارلیمنٹ اور کمیونٹی رہنماؤں کی لارڈ طارق احمد سے ملاقات
جموں کشمیر تحریک حق خود ارادیت برطانیہ و یورپ میں کانفرنسز اورسیمینارز منعقد کریگی : راجہ نجابت
قومی متروکہ وقف املاک بورڈ کا سربراہ پاکستانی ہندو شہری کو لگایا جائے:پاکستان ہندوکونسل کا مطالبہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کی وزیراعظم آزاد کشمیر راجہ فاروق حیدر اور شاہ غلام قادر سے ملاقات
پارک ویو کمیونٹی سنٹر شہیر واٹر میں ہمنوا یو کے کے زیرِ اہتمام یوم آزادی پاکستان تقریب کا انعقاد
راجہ نجابت حسین کا مسئلہ کشمیر پر بحث میں حصہ لینے پر ارکان یورپی پارلیمنٹ کو خراج تحسین
جب ریت پہ لکھو گے محبت کی کہانی!!!!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
بھارت کیخلاف مظاہروں، کانفرنسوں میں ہماری تنظیم اہم کردار ادا کریگی:راجہ نجابت حسین
مانچسٹر (محمد فیاض بشیر) 31اگست مانچسٹر سٹی سینٹر اور 7ستمبر اولڈھم میں نارتھ آف انگلینڈ کے کشمیری دوست ممبران پارلیمنٹ کے ہمراہ بھارت کے خلاف مظاہرے کریں گے۔ جموں و کشمیر تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے عہدیداران اپنے معاونین اور خواتین رہنماؤں کے ہمراہ شریک ہوں گے۔ ان مظاہروں کی کامیابی کے لیے ہر سطح پر کوشش کی جائے گی۔ برطانوی پارلیمنٹ میں آل پارٹیز کشمیر پارلیمنٹری گروپ کی چیئر پرسن ڈیبی ابراہم پہنچا اور اولڈن سے شیڈو کمیونٹی وزیر ایم پی جم میکمان ایم پی نہ صرف مظاہروں میں شرکت کریں گے بلکہ دونوں ارکان پارلیمنٹ 3اور 4ستمبر کو برطانوی پارلیمنٹ میں ہونے والی کشمیر لابی کو بھی سپانسر کریں گے، مذکورہ ارکان برطانوی پارلیمنٹ میں مقبوضہ کشمیر کے حالات پر بحث کا مطالبہ بھی کریں گے تحریکی عہدیدار برٹش کشمیریوں کی طرف سے برطانوی وزیراعظم بورس جانسن کو یادداشت بھی پیش کریں گے۔ان خیالات کا اظہار جموں و کشمیر تحریک حق خودارادیت انٹرنیشنل کے عہدیداروں نے مانچسٹر میں جموں و کشمیر انفارمیشن سینٹر میں ایک مشاورتی اجلاس کے موقع پر کیا، اجلاس کی صدارت چیئرمین تحریک حق خودارادیت راجہ نجابت حسین نے کی، اس موقع پر سیکرٹری جنرل محمد اعظم،برطانیہ کی چیئرپرسن کونسلر یاسمین ڈار، وائس چیئرمین امجد حسین مغل، یوتھ لیڈر ذیشان عارف، گریٹر مانچسٹر کی چیئرپرسن روبینہ خان، ثمینہ خان، پامیلا اشرف، عائشہ مبشر، سبینہ خان نے شرکت کی اور اپنی تجاویز سے آگاہ کیا۔ مقبوضہ کشمیر کے عوام کو بھارتی افواج کی طرف سے مقید بنانے اور عالمی برادری کی خاموشی کی پرزور الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے اس عزم کا اظہار کیا گیا کہ اگلے چند دنوں میں برطانیہ بھر میں کشمیری و پاکستانی خواتین، نوجوانوں اور انگریز سیاستدانوں کے علاوہ عام عوام کو بھی بھارتی مظالم سے آگاہ کرنے کیلئے ہر سطح پر کوششیں تیز کی جائیں گی۔ اس موقع پر تحریک کے چیئرمین راجہ نجابت حسین نے اجلاس کو بتایا کہ ہم اگلے دو ہفتوں کیلئے پروگرام ترتیب دے دیئے ہیں ان پروگراموں میں تمام کشمیری و پاکستانی تنظیمیں، کونسلرز، مذہبی اکابرین اور کمیوٹی رہنماؤں کی بڑی تعداد ہمارے ساتھ تعاون کر رہی ہے اب تک 100سے زائد برطانوی و یورپی ممبران پارلیمنٹ ہماری سرگرمیوں میں معاونت کر رہے ہیں، ہم توقع کرتے ہیں کہ آنے والے تمام مظاہروں اور کانفرنسوں میں ہماری تنظیم اہم کردار ادا کرے گی۔تحریک حق خودارادیت دیگر تنظیموں کے ساتھ مل کر برطانیہ و یورپ جس میں لندن 10ڈاؤننگ سٹریٹ کے سامنے مظاہرہ، برطانوی پارلیمنٹ میں کشمیر لابی کانفرنس، 30اگست برمنگھم سٹی سنٹر کے سامنے مظاہرہ،9ستمبر کو جنیوا اقوام متحدہ انسانی حقوق کونسل کے سامنے مظاہرہ، 12ستمبر کو یورپی پارلیمنٹ برسلز میں کشمیر کانفرنس، 10ستمبر کو برطانوی پارلیمنٹ میں خواتین کانفرنس کے علاوہ برطانوی وزیراعظم کو کشمیر پٹیشن پیش کی جائے گی۔ ان تمام مظاہروں، کانفرنسز و تقریبات میں برطانیہ و یورپ میں متحرک کشمیری تنظیمیں، کمیونٹی رہنما معاونت اور شرکت کریں گے۔ سیکرٹری جنرل محمد اعظم نے لیبرپارٹی اور اولڈھم میں فری کشمیر مہم کے پروگرام پر رپورٹ پیش کی جبکہ کونسلر یاسمین ڈار نے لیبرپارٹی کی لیڈرشپ سے رابطوں کے حوالے سے تحریک عہدیداران کو آگاہ کیا۔اس موقع پر خواتین رہنماؤں نے مقبوضہ کشمیر کی خواتین اور نوجوانوں کے بارے میں تشویشناک خبریں آنے پر عالمی برادری سے مطالبہ کیا کہ وہ بھارتی اقدامات کے خلاف زبانیں کھولیں اور کشمیریوں کے تحفظ کیلئے ہماری معاونت کریں۔