مقبول خبریں
ایسٹرن پویلین ہال اولڈہم میں آزادکشمیر میں قائم اسلام ویلفیئر ٹرسٹ کے سالانہ چیرٹی ڈنر کا انعقاد
مسئلہ کشمیر بارےیورپی پارلیمنٹ انتخابات پر برطانیہ و یورپ میں بھرپور لابی مہم چلائینگے،راجہ نجابت
مسئلہ کشمیر کو پر امن طریقے سے حل کیا جائے: برطانوی و یورپی ارکان پارلیمنٹ کا مطالبہ
برطانیہ میں آباد تارکین وطن کی مسئلہ کشمیر پر کاوشیں قابل تحسین ہیں:چوہدری محمد سرور
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
کشمیریوں کو ان کا حق دیئے بغیر خطے میں پائیدار امن کا حصول ممکن نہیں: راجہ نجابت حسین
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
برطانیہ میں مقیم کشمیری و پاکستانی 16مارچ کو بھارت کے خلاف مظاہرہ کریں گے: راجہ نجابت حسین
سرچ آپریشن
پکچرگیلری
Advertisement
کشمیر آرفنز ریلیف ٹرسٹ کی سالانہ تقریب ، سیاسی، سماجی، کمیونٹی اور کاروباری شخصیات کی شرکت
اولڈہم (محمد فیاض بشیر)اولڈہم کے مقامی ہال میں میرپور آزاد کشمیر میں قائم جنوبی ایشیا کے سب سے بڑے یتیم گھر کشمیر آرفنز ریلیف ٹرسٹ کے سالانہ ڈنر کا انعقاد ہوا جسمیں سیاسی سماجی کمیونٹی کاروباری اور مذہبی شخصیات نے شرکت کی۔ کشمیر آرفنز ریلیف فنڈ کے بانی اور چیئرمین چوہدری اختر کا کہنا تھا کہ انہیں فخر ہے کہ کورٹ جنوبی ایشیا کا سب سے بڑا یتیم گھر ہے جہاں پر یتیم بچوں کو دنیا کی تمام آسائش کے ساتھ اعلیٰ تعلیم بھی دی جاتی ہے۔ ان کا مذید کہنا تھا کہ کشمیر آرفنز ریلیف ٹرسٹ میرا خواب تھا ۔ ٹرسٹ نے دنیا بھر میں منفرد کام کی وجہ سے مقام حاصل کیا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ یہاں پر رنگ ونسل مذہب، سے بالاتر اور پاکستان بھر سے یتیم اور بے آسرا بچے آتے ہیں اور یہ یتیم نہیں بلکہ امیر خانہ ہے کیونکہ ہم یہاں بچوں کو وہ تمام تر سہولیات دیتے ہیں جو ہم اپنے بچوں کو مہیا کرتے ہیں۔ عمر ریاض کا کہنا تھا کہ ہمیں اس ٹرسٹ کا حصہ بننے پر فخر ہے اور رضاکارانہ خدمات سر انجام دیتے ہیں۔ اولڈہم کونسل کے کونسلرشاہد مشتاق مجھے کورٹ جانے کا اتفاق ہوا وہاں کے انتظامات دیکھ کر حیرانگی ہوئی بہت ہی اچھا کام ہو رہا ہے۔ کونسلر ڈاکٹر زاہد چوہان کا کہنا تھا کہ یتیموں اور بے سہارا بچوں کی مدد کرنا ہمارا مذہبی اور سماجی فریضہ ہے۔ عامر فیض کا کہنا تھا کہ ٹرسٹ کے ساتھ کام کرنے نے مجھے زندگی کا مقصد سکھایا ہے ہماری خوش قسمتی ہے کہ ہم اسکا حصہ ہیں۔ ٹرسٹ کے ساتھ رضاکارانہ خدمات انجام دینے والی ہما ، سائرہ اور محمد عزیز کا کہنا تھا کہ کورٹ میں لوگوں کے دے گئے عطیات شفاف طریقے سے خرچ ہوتے ہیں ۔ اولڈہم کونسل کی ڈپٹی لیڈر کونسلر عروج شاہ کا کہنا تھا کہ جن افراد کے پاس وسائل ہیں انہیں کم وسائل والوں کے ضرور مدد کرنی چاہئے۔ تقریب کی نظامت حبیب ملک نے کی۔ سالانہ چیرٹی ڈنر کے موقع پر کورٹ ٹرسٹ کی دستاویزی فلم بھی دکھائی گئ اور شرکائے تقریب نے کشمیر آرفنز ریلیف ٹرسٹ کے مثالی کام سے متاثر ہو کر دل کھول کر عطیات دیے ۔ بانی و چئیرمن چوہدری اختر نے سب کو اس ادارے کا دورہ کرنے کی دعوت عام دی تاکہ اپنی آنکھوں سے وہاں پر موجود سہولیات بچوں کی تعلیم و تربیت اور رہن سہن کی سہولیات کا از خود مشاہدہ کر سکیں۔