مقبول خبریں
مسلم کانفرنس کے رہنما چوہدری بشیر رٹوی کی طرف سے چوہدری علی شان سونی کے اعزاز میں افطار پارٹی
کونسلر محمد صادق نے دوسری بار میئر لندن بارو آف سٹن کا حلف اٹھالیا، کمیونٹی کی مبارکباد
مسئلہ کشمیر کو پر امن طریقے سے حل کیا جائے: برطانوی و یورپی ارکان پارلیمنٹ کا مطالبہ
برطانیہ میں آباد تارکین وطن کی مسئلہ کشمیر پر کاوشیں قابل تحسین ہیں:چوہدری محمد سرور
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
کشمیریوں کو ان کا حق دیئے بغیر خطے میں پائیدار امن کا حصول ممکن نہیں: راجہ نجابت حسین
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
پلیک گیٹ ہا ئی سکول بلیک برن میں تعینات ٹیچر کیتھرین نے روزے رکھنے شروع کر دیے
میرے سارے خواب سمندر جیسے ہیں!!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
حضرت امام بریؒ ،حضرت خواجہ بہاؤ الدین نقشبندؒ کے عرس پر محفل کا اہتمام
راچڈیل (محمد فیاض بشیر)دارالمنور گمگھول شریف سنٹر راچڈیل میں حضرت امام بری رحمتہ اللہ علیہ اور حضرت خواجہ بہاؤ الدین نقشبند رحمۃاللہ علیہ بخارا شریف کے سالانہ عرس مبارک پر ایک پر رونق روحانی محفل کا اہتمام کیا گیا۔محفل پاک کا آغاز باقاعدہ رب العالمین کے پاک کلام سے کیا گیا۔منقبت اور نعت رسول مقبول صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم حاجی محمد اشفاق وارثی اور حاجی محمد ظفر نے پیش کی۔ بانی دارالمنور گمگھول شریف صوفی محمد زمان نے صوفیاء کرام کے سالانہ عرس کی محفل کا انعقاد کیا ، منقبت کے فرائض حافظ محمد نور نے سر انجام دیے۔ مہمان خصوصی ادارہ نور السلام فیصل آباد کے بانی پیر ابو احمد محمد مقصود مدنی کا کہنا تھا کہ حضرت محمد صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم نے فرمایا ہے کہ جو خلوص نیت سے رب کریم کا ذکر صرف رب کریم کی رضا کے لیے کرے گا فلاح پائے گا صوفیائے کرام نے پوری حیات مبارک اسی پیغام کو پھیلایا ۔ان کا مذید کہنا تھا کہ رب کریم کی رضا اور ذکر مردہ دلوں کو جلا بخشتی ہے ان کا کہنا تھا کہ شاہ نقشبند اور حضرت امام بری رحمتہ اللہ نے یہی پیغام عام کیا کہ رب کریم کا ذکر کرو جتنا بھی مردہ دل ہو زندہ ہو جاتا ہے ۔ پیر ابو احمد محمد مقصود مدنی کا کہنا تھا کہ ادارہ نور السلام فیصل آباد پاکستان کا یہی پروگرام ہے کہ گھر گھر علم پہنچاؤ اور حضور پاک صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کی محبت کا دیا جلاو۔ صاحبزادہ جاوید اختر کا کہنا تھا کہ اولیاء اور صوفیائے کرام کے پیغام کو عام کرنے کا مقصد نوجوان نسل اور بڑے ان پر عمل کر کے رب کریم اور رسول صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کی خوشنودی حاصل کریں۔ حافظ محمد اخلاق کا کہنا تھا کہ انہوں نے نوجوان نسل کو پیغام دیا ہے کہ آقا کے غلاموں کا ذکر کرنے محبت پیدا ہوتی ہے۔ صوفی محمد زمان کا کہنا تھا کہ بزرگوں کے نام پر پروگرام کرنے کا مقصد بزرگوں اور خصوصاً نوجوانوں نسل کے اندر انکی محبت پیدا ہو۔ کونسلر شکیل احمد کا کہنا تھا کہ اسلام امن کا دین ہے اور یہی پیغام ہمیں اولیا اور صوفیائے کرام کی زندگی اور عمل سے ملا ہے۔ اس روحانی محفل میں علماء کرام و مشائخ کے علاوہ بچوں نوجوانوں اور بزرگوں نے شرکت کی،محفل کا انعقاد کو عمران خان،فیاض حسین،محمد رفیق،عامر حفیظ کے کاوشوں سے ہوا۔ حافظ محمد نور و بانی صوفی محمد زمان نے تمام مہمانان گرامی و مقررین اور شرکاء محفل کا روحانی محفل میں شرکت کرنے پر شکریہ ادا کیا۔ امت مسلمہ اور پاکستان کی سلامتی و ترقی کے لیے خصوصی دعا کی گئ ۔