مقبول خبریں
یو کے آئی ایم شعبہ خواتین کا کمیونیٹیز خواتین کو ایک پلیٹ فارم پر اکٹھا کرنے کا خوبصورت جذبہ
بھارتی ہائی کمیشن کے باہر کشمیریوں کا احتجاجی مظاہرہ،لندن کی فضا آزادی کے نعروں سے گونج اٹھی
مسئلہ کشمیر کو پر امن طریقے سے حل کیا جائے: برطانوی و یورپی ارکان پارلیمنٹ کا مطالبہ
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
کشمیریوں کو ان کا حق دیئے بغیر خطے میں پائیدار امن کا حصول ممکن نہیں: راجہ نجابت حسین
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
برطانیہ میں مقیم کشمیری و پاکستانی 16مارچ کو بھارت کے خلاف مظاہرہ کریں گے: راجہ نجابت حسین
پھر ہم نے وہ چراغ ہوا کو تھما دیا!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
پاکستان پریس کلب مانچسٹر برانچ کا اجلاس، چوہدری مسرت فرینڈز آف پریس کلب کے چیئرمین منتخب
مانچسٹر (محمد فیاض بشیر)پاکستان پریس کلب برطانیہ گذشتہ دس سال سے صحافیوں کی فلاح بہبود اور دنیا بھر میں انکی پہچان کیلئے برسرپیکار ہے، برطانیہ میں صحافیوں کےحقوق کو تحفظ فراہم کرنے کے لیے قومی سطح پر یونینز موجود ہیں لیکن پاکستانی وکشمیری نژاد برطانوی صحافی ذہنی ہم آہنگی نہ ہونے کی وجہ سے ان میں شمولیت اختیار کرنے سے کتراتے ہیں اس سوچ کو مدنظر رکھتے ہوئے چند ساتھیوں نے مل کر پاکستان پریس کلب برطانیہ کی بنیاد رکھی تاکہ مادر وطن کے پریس کلبز کے ساتھ ہم آہنگی پیدا کی جائے۔ ان خیالات کا اظہار پاکستان پریس کلب برطانیہ کے صدر مبین چوہدری نے لال قلعہ ریسٹورانٹ مانچسٹر میں پاکستان پریس کلب برطانیہ گریٹر مانچسٹر کی جانب سے رکھی گئ ایک تقریب میں کیا۔ ان کا مذید کہنا تھا کہ اگر صدق دل سے کام کیا جائے تو راستے میں آنے والی تمام رکاوٹیں خود بخود ختم ہو جاتی ہیں ہم نے پاکستان نیشنل پریس کلب اسلام آباد ۔پریس کلب لاہور ،کراچی سندھ کے دیگر پریس کلبوں کے ساتھ آزاد کشمیر کے پریس کلبوں کے ساتھ باہمی مفاہمتی یاداشت پر دستخط ہو چکے ہیں جو ایک بہت بڑا کارنامہ ہے اس سے ہمارے کلب ممبران کو ووٹ کے علاوہ باقی وہی تمام سہولیات میسر ہوں گی جو پاکستان میں رہنے والے ممبران کو ہوتی ہیں اب ہم صوبہ بلوچستان اور خیبر پختون خواہ کے پریس کلبز کے ساتھ بھی مفاہمتی یاداشت پر دستخط اسی سال کریں گے۔ ان کا کہنا تھا کہ برطانیہ میں واحد ہمارا پرس کلب ہے جو ہر سال الیکشن کرواتا ہے اور اسکے لیے انتخابی عمل صاف وشفاف ہوتا ہے ان کا کہنا تھا کہ مستقبل میں صحافیوں کی تربیت کے لیے ورکشاپس کا بھی انعقاد کیا جائے گا اور مرکزی الیکشن کے بعد فیصلہ کیا گیا ہے کہ اب ریجن کی سطح پر بھی الیکشن ہونے چاہئیں اسی لیے برطانیہ بھر کے مختلف شہروں میں قائم کلب کی برانچوں کا دورہ کر کے نئے ممبران کو شامل کر رہے ہیں کلب کا حسن یہ ہے کہ جو کوئ بھی عہدہ لینے کی خواہش رکھتا ہے وہ کلب کے لیے کام کرے اور پھر الیکشن کے عمل میں حصہ لیکر آگے ا سکتا ہے ہم نے دس سال کے کٹھن سفر میں بنیاد رکھ دی ہے اب آنے والوں کے لیے آسانی ہے۔ ان کا مذید کہنا تھا کہ ہم نے مرکزی سطح پر صحافی برادری سے ہٹ کر فرینڈز آف پاکستان پریس کلب برطانیہ کی بھی بنیاد رکھی تھی اور پچھلے چند سالوں سے قابل احترام شخصیات نے بحثیت چئیرمن اچھے طریقے سے فرائض منصبی سر انجام دے اور الیکشن کے موقع پر انہوں نے بحثیت الیکشن کمشنر کردار ادا کیا جس سے کبھی بھی ہمارے انتخابی عمل کی شفافیت پر کوئ انگلی نہیں اٹھا سکتا کافی سوچ بچار اور ساتھیوں سے طویل مشاورت کے بعد فیصلہ کیا ہے کہ اب اس کا دائرہ کار علاقائی سطح تک بڑھایا جائے اسکے لیے فرینڈز آف پاکستان پریس کلب برطانیہ گریٹر مانچسٹر کے لیے نامور کاروباری شخصیت مسرت چوہدری کو چئیرمن نامزد کیا ہے۔ان کا کہنا تھا کہ مانچسٹر میں آکر خوشی ہوئی ہے اور نئے ساتھیوں نے شمولیت اختیار کی ہے جو ہمارے لیے باعث فخر بات ہے ۔ سابق صدر ارشد رچیال نے کلب کے سرگرمیوں اور اپنے دوسالہ دور اقتدار میں کلب اور ممبران کو سہولیات کے حصول کو ممکن۔بنانے کے لیے کی گئ کاوشوں بارے تفصیلی بتایا ان کا کہنا تھا کہ ہماری کوشش ہے کہ پاکستان اور آزاد کشمیر میں برطانیہ کے صحافیوں کو رہائشی صحافی کالونیوں میں کم نرخوں میں پلاٹ ملیں اس پر کام جاری ہے جب بھی کوئ تازہ ترین اطلاعات ہم تک پہنچیں تو ممبران تک پہنچا دیں گے۔ تقریب کی نظامت زاہد نور نے کی جبکہ تلاوت قرآن پاک کا شرف ایم ایم عالم کو نصیب ہوا۔ گریٹر مانچسٹر کے صدر اسحاق چوہدری، سابق مرکزی سینئر نائب صدر عابد اکرم چوہدری، ممبر ایگزیکٹو کمیٹی ماجد نذیر نے بھی اظہار خیال کیا۔ نئے شامل ہونے والوں میں ذوالفقار قاری، طارق لودھی،فرحت عباس کاظمی، اعتزاز احسن، میاں عامر،رضوان و دیگر شامل تھے۔ پریس کلب کے ممبران ذیشان احمد، وسیم چوہدری، حسن , غلام مصطفیٰ مغل بھی تقریب میں موجود تھے۔